عربى |English | اردو 
Surah Fatiha :نئى آڈيو
 
Sunday, December 8,2019 | 1441, رَبيع الثاني 10
رشتے رابطہ آڈيوز ويڈيوز پوسٹر ہينڈ بل پمفلٹ کتب
شماره جات
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
تازہ ترين فیچر
Skip Navigation Links
نئى تحريريں
رہنمائى
نام
اى ميل
پیغام
2016-07 آرٹیکلز
 
مقبول ترین آرٹیکلز
سماجی مومنٹم اٹھانے کی فکر کیجئے، آپکے پاس بڑی قوت ہے 1
:عنوان

. احوال :کیٹیگری
حامد كمال الدين :مصنف

285

 
’’سماجی مومنٹم‘‘ اٹھانے کی فکر کیجئے؛ آپکے پاس بڑی قوت ہے 1

احوال و تعلیقات

ملک میں آگےپیچھے لبرل ایجنڈا برداروں کو خوش کرنے والے اقدامات، اور اسلام پسند تنظیموں کی پریشانی اور ’عین وقت‘ پر کچھ مبنی بر تشویش بیانات، میٹنگز وغیرہ، کے تناظر میں سوشل میڈیا پر ہماری دی گئی ایک تحریر۔

اسلامی تحریکیں انتخابی اکھاڑے میں اس وقت جو مرضی کر لیں (ہم بھی اس کے مخالف نہیں) لیکن اس کے آپشن یہاں فی الوقت نہ ہونے کے برابر ہیں۔

اسلامی تحریکیں الیکشن جیتیں یا ہاریں (بلکہ ہمیشہ ہاری ہیں، جیتی کب ہیں) سیاست میں البتہ بہت بڑا بڑا کردار ادا کر جاتی رہی ہیں۔ اس نکتے پر براہ کرم غور فرمائیے۔ ’’سیاست‘‘ میں اپنے اثرانداز ہونے کےلیے یہ جس ’چیک‘ کو اللہ کے فضل سے بڑی کامیابی کے ساتھ کیش کرا لیتی رہی ہیں، وہ ہے ’’معاشرے میں اسلام کی جڑیں‘‘ اور ’’اسلام کے حق میں پبلک موبلائزیشن‘‘۔ اسی سے تحریکِ پاکستان کے وقت ’’حالات‘‘ نے اسلام کے آگے گھٹنے ٹیکے۔ اسی سے دستور میں قراردادِ مقاصد اور تکفیرِ قادیانیت وغیرہ ایسے عظیم الشان اقدامات عمل میں لائے گئے، باوجود اس کے کہ دینی قوتوں کے اپنے ووٹ اُس وقت بھی نہ ہونے کے برابر تھے۔ اِسی سے آپ جہادِ افغانستان میں سرخرو ہوئے۔ اور اِسی سے بہت سارے برج الٹے گئے۔ خدا را اس نقطے کو سمجھئے؛ ہم آج بھی طاقت کے دھانے پر بیٹھے ہیں۔

’’سماجی مومنٹم‘‘ جو اسلام کے حق میں ہو اور پبلک میں اس کو ایک زبان میسر آ گئی ہو، آپ کی قوت کا راز ہے۔ یہ خودبخود سیاسی مومنٹم میں ڈھلتا ہے اور بھٹو جیسے ’لیفٹسٹ‘ بھی آپ کی رَو میں بہنے پر مجبور ہوتے ہیں۔ اس کے بغیر نواز شریف ایسے ’رائٹسٹ‘ بھی لبرل رَو میں بہتے چلے جاتے ہیں۔[1] خدا را اس کا ادراک کیجئے۔ اور ’نوازشریف‘ کو موضوع بنانے کی بجائے اس جانب توجہ فرمائیے: لبرلزم کے مقابلے پر اپنی سیاسی جنگ کو انتخابی کھیل سے وسیع تر کر لیجئے۔ آپ کے آپشن بڑھ جاتے ہیں۔

***

چند ہفتوں کے دوران لبرل جہت کے پےدرپے کئی اقدامات کے پس منظر میں، ہمارا چند ماہ پیشتر کا اداریہ (http://eeqaz.co/112015_idaria/) ایک بار پھر توجہ چاہتا ہے۔ اس کے چیدہ اقتباسات یہاں پیش خدمت ہیں:

***

قیامِ پاکستان کا مومنٹم اپنی پوری قوت کے ساتھ دو تین عشرے تک ہی چل سکتا تھا۔ یعنی ساٹھ، بڑی حد ستّر کی دَہائی۔ یہ تو شکر کیجئے، کچھ اضافی توانائی اس کے بعد بھی اسے افغان جہاد کے دم سے میسر آئی رہی جو نوّے کی دَہائی تک معاملہ اُسی رخ پر چلتا رہا بلکہ ضیاء الحق ایسی اسلام پسند شخصیت کے دم سے کچھ مزید توانا نظر آیا۔ ورنہ یہ فرق قیامِ پاکستان کے دو تین عشرے بعد ہی دیکھنے میں آسکتا تھا۔ اسلامی سیکٹر نے اس مومنٹم سے کچھ بروقت فوائد اٹھائے بھی۔ مثلاً قراردادِمقاصد کی منظوری، 73 کے آئین میں اسلامی اجزاء کی شمولیت، قادیانیوں کی تکفیر، توہینِ رسالت کی سزا اور کچھ دیگر اسلامی امور کو ریاستی فورم سے پاس کروا لینا۔ وقت سنبھال لینے کا یہ ایک اچھا ثبوت تھا۔ بلاشبہ یہ کام اُسی مومنٹم کے بل پر کر لینے کا تھا جب ’قرض خواہ‘ منہ میں زبان رکھتا تھا اور ’مقروض‘ اپنے آپ کو اس کا کچھ دَیندار مانتا تھا۔ اُس بھلے دور میں ہی یہ چیزیں اگر پاس نہ کروا لی گئی ہوتیں تو آج جب ’قرض خواہ‘ حالات کے تیور دیکھتے ہوئے دبک گیا ہے بلکہ اپنے ’قرض‘ کی بات اونچی آواز میں کرنے پر ’حوالات‘ کا خطرہ محسوس کرنے لگا ہے… اسلامی سیکٹر آج نہ صرف اس پوزیشن میں نہیں کہ قراردادِمقاصد یا قادیانیوں (ایسے ’معزز وبااثر شہریوں‘) کی تکفیر یا قانون ناموس رسالت وغیرہ ایسی ’بھاری‘ اشیاء پاس کروا کر دکھا دے، اور نہ دُوردُور تک ایسا زور پا لینے کی اس کے ہاں کوئی صورت نظر آتی ہے، بلکہ ڈر یہ پیدا ہو گیا ہے کہ (خدانخواستہ) ایک مسلسل لبرل تخم ریزی کے نتیجے میں کوئی شاطرانہ کوشش اب اگر کسی وقت ایسی ہوتی ہے کہ ان اسلامی اقدامات کو ایک ایک کر کے ’ترمیمات‘ کی نیند سلا دیا جائے تو اس کے آڑے آنے کےلیے مطلوب دم خم بھی شاید ہمارے اسلامی سیکٹر کے اندر موجود نہیں۔ یعنی وہ چیزیں جو اُن بھلے وقتوں میں پاس کروا لی گئی تھیں آج ان کو بچا رکھنا ہی تقریباً ایک چیلنج ہے۔ یہ ناتوانی ’سیٹوں‘ کی سلاجیت سے نہ جائے گی اور نہ ایم ایم اے یا ملی یکجہتی ایسی کسی بےفائدہ مشقت سے۔

 

 

 



[1]    یہ بات غورطلب ہے اسلامی سیکٹر ’’شوکتِ اسلام‘‘ کی رَو اٹھا لینے کے نتیجے میں، بہت تھوڑی سیٹوں کے باوجود بھٹو سے بہت کچھ لےلینے میں کامیاب رہا۔ دوسری جانب ایم ایم اے کے وقت بہت ساری سیٹیں رکھنے کے باوجود یہ مشرف کو بہت کچھ دے کر چھوٹا۔ واضح بات ہے ایک مسلم ملک میں آپ کی قوت کا راز ’سیٹوں‘ سے بڑھ کر کسی اور چیز میں ہے، کاش اس بات کا ادراک کر لیا جائے۔ یہ تیز رفتار پسپائی فی الفور نہ روکی گئی تو کچھ بہت بڑےبڑے حادثے ہو سکتے ہیں اور آپ عشروں کے حساب سے پیچھے دھکیلے جاتے رہیں گے، خدانخواستہ۔

Print Article
Tagged
متعلقہ آرٹیکلز
کشمیر کاز، قومی استحکام، پختہ اندازِ فکر کی ضرورت
Featured-
احوال-
حامد كمال الدين
      کشمیر کاز، قومی استحکام، پختہ اندازِ فکر کی ضرورت حامد ۔۔۔
امارات کا سعودی عرب کو یمن میں بیچ منجدھار چھوڑنے کا فیصلہ
احوال-
حامد كمال الدين
امارات کا سعودی عرب کو یمن میں بیچ منجدھار چھوڑنے کا فیصلہ حامد کمال الدین شاہ سلمان کے شروع دنوں میں ی۔۔۔
پاک افغان معاملہ.. تماش بینی نہیں سنجیدگی
احوال-
حامد كمال الدين
پاک افغان معاملہ.. تماش بینی نہیں سنجیدگی حامد کمال الدین وہ طعنے جو میرے کچھ مخلص بھائی او۔۔۔
کلچرل وارداتیں اور ہماری عدم فراغت!
احوال-
حامد كمال الدين
کلچرل وارداتیں اور ہماری عدم فراغت! حامد کمال الدین ظالمو! نہ صرف یہاں کا منبر و محراب ۔۔۔
ڈیل آف دی سینچری… مسئلۂ فلسطین کے ساتھ ٹرمپ کی زورآزمائی
احوال-
ادارہ
تحریر:   تحریم افروز یوں تو امریکا سے مسلمانوں  کے معاملے میں کبھی خیر کی توقع رہی ہی&۔۔۔
ڈیل آف سنچری ، فلسطین اور امریکہ
احوال-
ادارہ
تحریر: فلک شیر کچھ عرصے سے فلسطین کے مسئلے کے حل کے لیے امریکی صدر ٹرمپ کی "صدی کی ڈیل" کا شہرہ ہے۔دو سال ۔۔۔
طیب اردگان امیر المؤمنین نہیں ہیں، غلط توقعات وابستہ نہ رکھیں۔
احوال- امت اسلام
ذيشان وڑائچ
ہمارے کچھ نوجوان طیب اردگان کے بارے میں عجیب و غریب الجھن کے شکار ہیں۔ کوئی پوچھ رہا ہے کہ۔۔۔
’’سلفیوں‘‘ کے ساتھ تھوڑی زیادتی ہو رہی ہے!
احوال- امت اسلام
حامد كمال الدين
’’سلفیوں‘‘ کے ساتھ تھوڑی زیادتی ہو رہی ہے!    عرب داعی محترم ابو بصیر طرطوسی کے ساتھ بہت م۔۔۔
پاکستانی سیاست میں اسلامی سیکٹر کے آگے بڑھنے کے آپشنز
احوال-
اصول- منہج
راہنمائى-
حامد كمال الدين
پاکستانی سیاست میں اسلامی سیکٹر کے آگے بڑھنے کے آپشنز تحریر: حامد کمال الدین میری نظر میں، اس۔۔۔
ديگر آرٹیکلز
بازيافت- سلف و مشاہير
Featured-
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
امارتِ حضرت معاویہؓ، مابین خلافت و ملوکیت نوٹ: تحریر کا عنوان ہمارا دیا ہوا ہے۔ از کلام ابن ت۔۔۔
تنقیحات-
Featured-
حامد كمال الدين
سنت کے ساتھ بدعت کا ایک گونہ خلط... اور "فقہِ موازنات" حامد کمال الدین مغرب کے اٹھائے ہوئے ا۔۔۔
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
Featured-
حامد كمال الدين
"انسان دیوتا" کے حق میں پاپ! حامد کمال الدین دین میں طعن کر لو، جیسے مرضی دین کے ثوابت ۔۔۔
Featured-
بازيافت-
حامد كمال الدين
تاریخِ خلفاء سے متعلق نزاعات.. اور مدرسہ اہل الأثر حامد کمال الدین "تاریخِ خلفاء" کے تعلق س۔۔۔
Featured-
باطل- اديان
حامد كمال الدين
ریاستی حقوق؛ قادیانیوں کا مسئلہ فی الحال آئین کے ساتھ حامد کمال الدین اعتراض: اسلامی۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
لفظ  "شریعت" اور "فقہ" ہم استعمال interchangeable    ہو سکتے ہیں ۔۔۔
تنقیحات-
Featured-
حامد كمال الدين
ماتریدی-سلفی نزاع، یہاں کے مسلمانوں کو ایک نئی آزمائش میں ڈالنا حامد کمال الدین ایک اشع۔۔۔
تنقیحات-
Featured-
حامد كمال الدين
منہجِ سلف کے احیاء کی تحریک میں ’مارٹن لوتھر‘ تلاش کرنا! حامد کمال الدین کیا کوئی وجہ ہے کہ۔۔۔
Featured-
احوال-
حامد كمال الدين
      کشمیر کاز، قومی استحکام، پختہ اندازِ فکر کی ضرورت حامد ۔۔۔
تنقیحات-
Featured-
مشكوة وحى- علوم حديث
حامد كمال الدين
اناڑی ہاتھ درایت! صحیح مسلم کی ایک حدیث پر اٹھائے گئے اشکال کے ضمن میں حامد کمال الدین ۔۔۔
راہنمائى-
حامد كمال الدين
(فقه) عشرۃ ذوالحج اور ایامِ تشریق میں کہی جانے والی تکبیرات ابن قدامہ مقدسی رحمہ اللہ کے متن سے۔۔۔
تنقیحات-
ثقافت- معاشرہ
حامد كمال الدين
کافروں سے مختلف نظر آنے کا مسئلہ، دار الکفر، ابن تیمیہ اور اپنے جدت پسند حامد کمال الدین دا۔۔۔
اصول- منہج
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
اصول- عقيدہ
حامد كمال الدين
ایک ٹھیٹ عقائدی تربیت ہماری سب سے بڑی ضرورت حامد کمال الدین اسے فی الحال آپ ایک ناقص استقر۔۔۔
ثقافت- خواتين
ثقافت-
حامد كمال الدين
"دردِ وفا".. ناول سے اقداری مسائل تک حامد کمال الدین کوئی پچیس تیس سال بعد ناول نام کی چیز ہاتھ لگی۔ وہ۔۔۔
احوال-
حامد كمال الدين
امارات کا سعودی عرب کو یمن میں بیچ منجدھار چھوڑنے کا فیصلہ حامد کمال الدین شاہ سلمان کے شروع دنوں میں ی۔۔۔
احوال-
حامد كمال الدين
پاک افغان معاملہ.. تماش بینی نہیں سنجیدگی حامد کمال الدین وہ طعنے جو میرے کچھ مخلص بھائی او۔۔۔
احوال-
حامد كمال الدين
کلچرل وارداتیں اور ہماری عدم فراغت! حامد کمال الدین ظالمو! نہ صرف یہاں کا منبر و محراب ۔۔۔
احوال-
ادارہ
تحریر:   تحریم افروز یوں تو امریکا سے مسلمانوں  کے معاملے میں کبھی خیر کی توقع رہی ہی&۔۔۔
کیٹیگری
Featured
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
Side Banner
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
احوال
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اداریہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اصول
عقيدہ
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ایقاظ ٹائم لائن
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
ذيشان وڑائچ
مزيد ۔۔۔
بازيافت
سلف و مشاہير
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
حامد كمال الدين
ادارہ
مزيد ۔۔۔
باطل
فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
اديان
حامد كمال الدين
فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
تنقیحات
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ثقافت
معاشرہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
خواتين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
جہاد
مزاحمت
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
راہنمائى
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
رقائق
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
فوائد
فہدؔ بن خالد
احمد شاکرؔ
تقی الدین منصور
مزيد ۔۔۔
متفرق
ادارہ
عائشہ جاوید
عائشہ جاوید
مزيد ۔۔۔
مشكوة وحى
علوم حديث
حامد كمال الدين
علوم قرآن
حامد كمال الدين
مریم عزیز
مزيد ۔۔۔
مقبول ترین کتب
مقبول ترین آڈيوز
مقبول ترین ويڈيوز