عربى |English | اردو 
Surah Fatiha :نئى آڈيو
 
Tuesday, July 7,2020 | 1441, ذوالقعدة 15
رشتے رابطہ آڈيوز ويڈيوز پوسٹر ہينڈ بل پمفلٹ کتب
شماره جات
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
تازہ ترين فیچر
Skip Navigation Links
نئى تحريريں
رہنمائى
نام
اى ميل
پیغام
Shuroot2ndAdition آرٹیکلز
 
مقبول ترین آرٹیکلز
چوتھی شرط صدق اور وفاء
:عنوان

:کیٹیگری
حامد كمال الدين :مصنف

لَآ اِلٰہَ اِلاَّ اللہ کی چوتھی شرط

 
 

صدق اور وفاء

 

چوتھی شرط ہے (اس کلمہ کے ساتھ) صدق اور وفا، یہاں تک کہ (اس کلمہ کے معاملہ میں) دروغ اور منافقت کا وتیرہ خارج از امکان ہوگیا ہو۔

 

توضیح:

دیانتدارانہ اقرار اس کلمہ کی چوتھی شرط ہے۔ ایک ایسی سچائی اس کلمہ کے ادا کرتے وقت قلب و ذہن میں پائی جانا ضروری ہے جو اس کلمہ کی بابت آدمی کے یہاں منافقت اور دروغ گوئی کا رویہ اپنایا جانے کی راہ مسدود کردے۔

”نفق“ عربی زبان میں سرنگ لگانے کو کہتے ہیں۔ منافقت دراصل دل کا کھوٹ ہے۔ ضروری نہیں کہ منافقت کا باعث محض کوئی ’بے وجہ کی بدنیتی‘ ہو۔ شخصی منافع، خاندانی روابط، معاشرتی مجبوریاں، سیاسی مفادات، ’مستقبل‘ سے متعلق خدشات .... بہت کچھ ایسا ہے جو ایک ایک کرکے اس لَآ اِلٰہَ اِلاَّ اللہ کی حقیقت کے آڑے آنے کی کوشش کرتا ہے۔ بسا اوقات جس چیز کو دین میں نفاق کہا گیا ہے آدمی اُس کو ’حقیقت پسندی‘ اور ’دانش مندی‘ سمجھ کر اپناتا ہے اور جس چیز کو ’ایمان کا تقاضا‘ کہا گیا ہے وہ آدمی کو ’خواہ مخواہ کی بے وقوفی‘ اور ’دیوانہ پن‘ نظر آتا ہے۔ اہل ایمان پر اہل نفاق کی یہ محض کوئی پھبتی نہیں تھی جو قرآن میں یوں نقل ہوئی ہے:

وَإِذَا قِيلَ لَهُمْ آمِنُواْ كَمَا آمَنَ النَّاسُ قَالُواْ أَنُؤْمِنُ كَمَا آمَنَ السُّفَهَاء (البقرہ: 13)

”اور جب انہیں کہا جاتا ہے ایمان لاؤ اس طرح جس طرح (یہ) لوگ ایمان لائے تو کہتے ہیں: کیا ہم ایمان لائیں اس طرح جس طرح (یہ) نادان ایمان لے کر آئے ہیں؟“

چنانچہ بہت سی شخصی یا خاندانی یا ملکی یا معاشرتی مجبوریاں ایسی ہوتی ہیں جو اس لَآ اِلٰہَ اِلاَّ اللہ کی حقیقت پر ڈٹ جانے میں مانع ہونے لگیں تب لَآ اِلٰہَ اِلاَّ اللہ کی حقیقت پر عمل پیرا رہنا آدمی کو ایک بڑا نقصان کرانے کے مترادف لگتا ہے اور ایسا ’خواہ مخواہ کا‘ نقصان کرانے کو آدمی محض بے وقوفی سمجھتا ہے۔

’صدق‘ کی صورت میں جو چوتھی شرط لَآ اِلٰہَ اِلاَّ اللہ کی شہادت معتبر ہونے کیلئے بیان کی گئی ہے وہ یہ کہ آدمی پوری دیانت کے ساتھ اور ممکنہ نتائج کے علی الرغم اس دعوت کو قبول کرے۔ صدق یہ ہے کہ آدمی جس بات کو ایک بار تسلیم کرلے اسی پر جم رہنے پر آمادہ ہو اور جو کہے اس کو کر دکھانے پر پوری طرح سنجیدہ ہو۔

’صدق‘ کی جو قرآنی اصطلاح ہے وہ عام زندگی میں محض ’سچ بولنے‘ سے کہیں زیادہ گہری اور وسیع ہے۔ یہ دراصل ایک بات پر ڈٹ رہنے کی استعداد ہے۔ صدق کی قرآنی اصطلاح کا مقصود یہ ہے کہ آدمی جو بات کردے پھر اس سے بدل جانے کو خارج از امکان کردے (رِجَالٌ صَدَقُوا مَا عَاهَدُوا اللَّهَ عَلَيْهِ فَمِنْهُم مَّن قَضَى نَحْبَهُ وَمِنْهُم مَّن يَنتَظِرُ وَمَا بَدَّلُوا تَبْدِيلًا - الأحزاب: 23) صدق دراصل ایمان اور لَآ اِلٰہَ اِلاَّ اللہ کی حقیقت پر جم جانا ہے اور اس کی راہ میں حائل ہر مفاد اور ہر خدشے کو نظر انداز کر دینا۔

یوں ایک طرح سے یہ ایک حلف وفاداری ہے۔ یہ انسان کا محض ایک حقیقت کو دل سے قبول کرنا ہی نہیں بلکہ باقی ماندہ زندگی اس پر ڈٹ جانے کا بھی اعلان ہے۔ چونکہ لَآ اِلٰہَ اِلاَّ اللہ کے اقرار کی یہ بھی ایک اہم جہت ہے لہٰذا اس کو بھی ایک باقاعدہ شرط کے طور پر اَلصِّدْقُ الْمُنَافِیْ لِلنِّفَاقِ کے الفاظ کے تحت بیان کردیا گیا۔

ایک کلمہ گو کیلئے چونکہ آگے چل کر لَآ اِلٰہَ اِلاَّ اللہ کے تقاضوں میں دوستی اور دشمنی کا مسئلہ تقریباً سرفہرست رہنا ہے اس لئے لَآ اِلٰہَ اِلاَّ اللہ کی اس چوتھی شرط میں اس بات کا انتظام کر دیا گیا۔ سو اگر یہ شرط سمجھ کر پوری کر لی جائے تو آگے چل کر لَآ اِلٰہَ اِلاَّ اللہکا ایک اہم ترین تقاضا (ولاءاور براء) پورا کیا جانا ممکن ہوتا ہے۔

 

************

 

شرطِ چہارم کے دلائل:

 

قرآن سے:

اللہ تعالیٰ فرماتا ہے:

الم ۔أَحَسِبَ النَّاسُ أَن يُتْرَكُوا أَن يَقُولُوا آمَنَّا وَهُمْ لَا يُفْتَنُونَ۔وَلَقَدْ فَتَنَّا الَّذِينَ مِن قَبْلِهِمْ فَلَيَعْلَمَنَّ اللَّهُ الَّذِينَ صَدَقُوا وَلَيَعْلَمَنَّ الْكَاذِبِينَ۔ (العنکبوت: 1۔3)

”الف، ل، م۔ کیا لوگوں نے یہ سمجھ رکھا ہے کہ وہ بس اتنا کہنے پر چھوڑ دیئے جائیں گے کہ ”ہم ایمان لائے“ اور ان کو آزمایا نہ جائے گا! حالانکہ ہم سب لوگوں کی آزمائش کر چکے ہیں جو ان سے پہلے گزرے ہیں۔ اللہ کو تو ضرور یہ دیکھنا ہے کہ سچے کون ہیں اور جھوٹے کون“۔

 

مزید ارشاد ہوتا ہے:

وَمِنَ النَّاسِ مَن يَقُولُ آمَنَّا بِاللّهِ وَبِالْيَوْمِ الآخِرِ وَمَا هُم بِمُؤْمِنِينَ۔ يُخَادِعُونَ اللّهَ وَالَّذِينَ آمَنُوا وَمَا يَخْدَعُونَ إِلاَّ أَنفُسَهُم وَمَا يَشْعُرُونَ۔فِي قُلُوبِهِم مَّرَضٌ فَزَادَهُمُ اللّهُ مَرَضاً وَلَهُم عَذَابٌ أَلِيمٌ بِمَا كَانُوا يَكْذِبُونَ  (البقرۃ: 8-10)

”بعض لوگ ایسے بھی ہیں جو کہتے ہیں کہ ہم اللہ پر اور آخرت کے دن پر ایمان لائے ہیں حالانکہ درحقیقت وہ مومن نہیں ہیں۔ وہ اللہ اور ایمان لانے والوں کے ساتھ دھوکہ بازی کر رہے ہیں مگر دراصل وہ خود اپنے آپ ہی کو دھوکے میں ڈال رہے ہیں اور انہیں اس کا شعور نہیں ہے۔ ان کے دلوں میں ایک بیماری ہے جسے اللہ نے اور زیادہ بڑھا دیا اور جو جھوٹ وہ بولتے ہیں اس کی پاداش میں ان کیلئے دردناک سزا ہے“۔

 

سنت سے:

صحیحین میں معاذ بن جبلؓ سے ثابت ہے کہ نبی ﷺ فرماتے ہیں:

مَا مِنْ اَحَدٍ یَشْھَدُ اَنْ لَا اِلٰہَ اِلَّا اللہ وَاَنَّ مُحَمَّداً عَبْدُہٗ وَرَسُوْلُہٗ، صِدْقاً مِّنْ قَلْبِہ اِلَّا حَرَّمَہٗ اللہ عَلَیٰ النَّارِ 
(البخاری مع الفتح: 1 / 226 ج 128 مسلم 1 / 61)

”جو آدمی بھی صدق دل سے یہ شہادت دے کہ اللہ کے سوا کوئی الٰہ نہیں اور یہ کہ محمد ﷺ اللہ کے رسول ہیں تو اللہ تعالیٰ اس شخص کو جہنم پر حرام کر دیتا ہے“

 

توضیح:

پس اس حدیث میں صدقاً من قلبہ کے الفاظ بول کر، لا الہ الا اللہ پڑھنے والے کے جنت جانے کے معاملہ میں ایک اور شرط بیان کردی گئی، یعنی دل کی سچائی سے لا الٰہ الا اللہ کہنا۔ کلمہ میں جو بات بیان ہوئی، اس سے دلی وفاداری۔ لا الہ الا اللہ کی صورت میں جس حقیقت کو جانا اور مانا گیا اس کو سچ کردکھانے پر آمادگی و دلجمعی۔
یہ کلمہ کی چوتھی شرط ہے جو اوپر مذکور آیات و احادیث میں وارد ہوئی ہے۔

Print Article
Tagged
متعلقہ آرٹیکلز
ديگر آرٹیکلز
Featured-
تنقیحات-
حامد كمال الدين
ترک حکمران پارٹی سے وابستہ "اسلامی" توقعات اور واقعیت پسندی حامد کمال الدین ذیل میں میری ۔۔۔
احوال- وقائع
باطل- فرقے
حامد كمال الدين
شام میں حضرت عمر بن عبدالعزیزؒ کے مدفن کی بےحرمتی کا افسوسناک واقعہ اغلباً صحیح ہے حامد کمال الد۔۔۔
جہاد- دعوت
عرفان شكور
كامياب داعيوں كا منہج از :ڈاكٹرمحمد بن ابراہيم الحمد جامعہ قصيم (سعودى عرب) ضرورى نہيں۔۔۔۔ ·   ضرور۔۔۔
باطل- فرقے
Featured-
حامد كمال الدين
"المورد".. ایک متوازی دین حامد کمال الدین اصحاب المورد کے ہاں "کتاب" سے اگر عین وہ مراد نہیں۔۔۔
جہاد-
احوال-
حامد كمال الدين
’دوحہ‘ اہل اسلام کی ’جنیوا‘ سے بڑی جیت، ان شاء اللہ حامد کمال الدین ہمیں ’’زیادہ خوش نہ ہونے۔۔۔
جہاد- تحريك
تنقیحات-
حامد كمال الدين
اسلامی تحریک کا ’’مابعد تنظیمات‘‘ عہد؟ Post-organizations Era of the Islamic Movement یہ عن۔۔۔
حامد كمال الدين
باطل فرقوں کےلیے گنجائش پیدا کرواتے، دانش کے کچھ مغالطے   کچھ علمی چیزیں مانند (’’لازم المذھب لیس بمذھب‘۔۔۔
باطل- فرقے
حامد كمال الدين
شیعہ سٹوڈنٹ کے ساتھ دوستی، شادی بیاہ   سوال: السلام علیکم سر۔ یونیورسٹی میں ا۔۔۔
بازيافت- سلف و مشاہير
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
امارتِ حضرت معاویہؓ، مابین خلافت و ملوکیت نوٹ: تحریر کا عنوان ہمارا دیا ہوا ہے۔ از کلام ابن ت۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
سنت کے ساتھ بدعت کا ایک گونہ خلط... اور "فقہِ موازنات" حامد کمال الدین مغرب کے اٹھائے ہوئے ا۔۔۔
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
"انسان دیوتا" کے حق میں پاپ! حامد کمال الدین دین میں طعن کر لو، جیسے مرضی دین کے ثوابت ۔۔۔
بازيافت-
حامد كمال الدين
تاریخِ خلفاء سے متعلق نزاعات.. اور مدرسہ اہل الأثر حامد کمال الدین "تاریخِ خلفاء" کے تعلق س۔۔۔
باطل- اديان
حامد كمال الدين
ریاستی حقوق؛ قادیانیوں کا مسئلہ فی الحال آئین کے ساتھ حامد کمال الدین اعتراض: اسلامی۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
لفظ  "شریعت" اور "فقہ" ہم استعمال interchangeable    ہو سکتے ہیں ۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
ماتریدی-سلفی نزاع، یہاں کے مسلمانوں کو ایک نئی آزمائش میں ڈالنا حامد کمال الدین ایک اشع۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
منہجِ سلف کے احیاء کی تحریک میں ’مارٹن لوتھر‘ تلاش کرنا! حامد کمال الدین کیا کوئی وجہ ہے کہ۔۔۔
احوال-
حامد كمال الدين
      کشمیر کاز، قومی استحکام، پختہ اندازِ فکر کی ضرورت حامد ۔۔۔
تنقیحات-
مشكوة وحى- علوم حديث
حامد كمال الدين
اناڑی ہاتھ درایت! صحیح مسلم کی ایک حدیث پر اٹھائے گئے اشکال کے ضمن میں حامد کمال الدین ۔۔۔
کیٹیگری
Featured
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
Side Banner
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
احوال
وقائع
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اداریہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اصول
عقيدہ
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ایقاظ ٹائم لائن
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
ذيشان وڑائچ
مزيد ۔۔۔
بازيافت
سلف و مشاہير
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
حامد كمال الدين
ادارہ
مزيد ۔۔۔
باطل
فرقے
حامد كمال الدين
فرقے
حامد كمال الدين
فرقے
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
تنقیحات
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ثقافت
معاشرہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
خواتين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
جہاد
دعوت
عرفان شكور
حامد كمال الدين
تحريك
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
راہنمائى
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
رقائق
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
فوائد
فہدؔ بن خالد
احمد شاکرؔ
تقی الدین منصور
مزيد ۔۔۔
متفرق
ادارہ
عائشہ جاوید
عائشہ جاوید
مزيد ۔۔۔
مشكوة وحى
علوم حديث
حامد كمال الدين
علوم قرآن
حامد كمال الدين
مریم عزیز
مزيد ۔۔۔
مقبول ترین کتب
مقبول ترین آڈيوز
مقبول ترین ويڈيوز