عربى |English | اردو 
Surah Fatiha :نئى آڈيو
 
Monday, August 8,2022 | 1444, مُحَرَّم 9
رشتے رابطہ آڈيوز ويڈيوز پوسٹر ہينڈ بل پمفلٹ کتب
شماره جات
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
تازہ ترين فیچر
Skip Navigation Links
نئى تحريريں
رہنمائى
نام
اى ميل
پیغام
weekly آرٹیکلز
 
مقبول ترین آرٹیکلز
اہل فساد میں سے کسی کے مرنے پر "اہل صلاح" کا آپس میں فساد کرنا
:عنوان

سلف میں سے"اسوہ"قسم کے لوگ ائمہٴ بدعت کےجنازے میں شرکت & انکےلیے اعلانیہ استغفار سے گریز کرتے؛ جس سے انکا مقصد بدعت/برائی کو معاشرے میں اچھوت بنا رکھنا ہوتا؛ نہ کہ اسکے جنازےیا اسکےلیےدعائےمغفرت کو حرام سمجھنا

. تنقیحات :کیٹیگری
حامد كمال الدين :مصنف

اہل فساد میں سے کسی کے مرنے پر "اہل صلاح" کا آپس میں فساد کرنا!

تحریر: حامد کمال الدین

کچھ ایسے لوگ جنہیں خارجِ اسلام ٹھہرانے کا کوئی معلوم فتوىٰ ہمارے ریکارڈ پر نہیں، البتہ انہیں ظالم یا مفسد سمجھنے پر اصحابِ سنت قریب قریب متفق پائے گئے ہوں…

ایسے لوگوں کےمرنے پر یہ تینوں رویے اپنی اپنی جگہ درست ہوتے یا ہو سکتے ہیں:

1.   بعض اصحابِ سنت کی طرف سے ان کےلیے ایک سرسری اظہارِ افسوس یا دعائے مغفرت کر دی جانا۔ اس اعتبار سے کہ استغفار کی ممانعت صرف ایسے شخص کے حق میں ہے جسے دین سے خارج قرار دے دیا گیا ہو؛ ورنہ اصل یہ ہے کہ ایک مسلمان کےلیے، خواہ وہ جیسا بھی ہو، اللہ سے بخشش کی منت سماجت کی جائے۔ خصوصاً جبکہ یہ استغفاری کلمات کہنے سے ان کے پیش نظر کوئی مصلحتِ دینی بھی ہو؛ اگرچہ ایسی کوئی مصلحت تصور کر لینے میں وہ اجتہادی خطا پر کیوں نہ ہوں۔

2.   اکثر اصحابِ سنت کی طرف سے اس موقع پر ایک بامقصد خاموشی اپنائی جانا۔ یعنی کچھ بھی اس شخص کے متعلق نہ کہنا؛ گویا کوئی واقعہ ہی نہیں ہوا۔ جنازہ (ترحُّم، استغفار) ایک مسلمان کے حق میں چونکہ فروضِ کفایہ میں آتا ہے؛ لہٰذا امت میں سے چند لوگوں کے اس سے عہدہ برآ ہونے کو ہی اس باب میں کافی سمجھنا؛ اور اس کے دنیا سے جانے کا کوئی غیر معمولی افسوس، یا اس کےلیے عزاء اور ترحُّم کا کوئی خاص اہتمام نہ کرنا۔ مسلمان سمجھنے کے ناطے، اس کےلیے بخشش کی دعاء کرنا بھی ہو تو اسے "پبلک" واقعہ اور ایک "عوامی رَو" نہ بنانا۔ یہ بات "ہجر کے احکام" کے تحت باقاعدہ مذکور ملتی ہے:  سلف سے یہ عام منقول ہے کہ ان میں "اُسوہ" قسم کے لوگ ائمہٴ بدعت کے جنازے میں خود شرکت کرنے سے عمدًا پرہیز کر لیتے، نیز ان کےلیے اعلانیہ استغفار سے گریز کرتے؛ جس سے ان کا مقصد بدعت کو معاشرے میں اچھوت بنا رکھنا ہوتا؛ نہ کہ اس کے جنازے یا اس کےلیے دعائے مغفرت کو حرام سمجھنا۔ بدعت کی توقیر ہو جانے کے تمام دروازے بند رکھنا، اور بدعت کےلیے معاشرے میں ایک تنفّر اور بیزاری برقرار رکھنا سلف کی ایک بڑی ترجیح رہی ہے؛ اور یہ شے ان کے ہاں "اقامتِ دین" میں آتی تھی۔ "اقامتِ دین" جسے دورِ حاضر میں سیاسی معانی کچھ ضرورت سے زیادہ پہنا دیے گئے ہیں۔

3.   یہ دیکھتے ہوئے کہ بعض لوگ جذبات کی رَو میں بہہ کر (یا میڈیا کے اِلہام پر مبنی "تصورِ خیر وشر" کے کسی ریلے کی نذر ہو کر)، ایک ایسے شخص کو جو زندگی زندگی کسی ظلم یا فساد یا شرکی رمز symbol بنا رہا ہو، وہ تکریم دینے لگے ہیں جو مسلم معاشرے میں ایک خیر، صلاح اور سنت پر قائم شخصیت ہی کا حق ہوتا ہے…تو اس پر لوگوں کو کچھ ضروری تنبیہ کر دینا – اور اگر اس تنبیہ کےلیے مرنے والے کے کچھ شر اور فساد کا ذکر کر دینا ناگزیر ہو گیا ہو تو اس کا بھی کچھ بیان کر دینا – یہ رویہ بھی اس موقع پر ایک بالکل صحیح طبعی شرعی رویہ ہو گا۔ یا یوں کہہ لیجیے، اجتہادی صوابدیدوں میں سے ایک صوابدید ہو گا۔

*****

درج بالا تینوں رویے چونکہ اپنی اپنی جگہ صحیح طرزِعمل ہیں، لہٰذا ان میں سے جس بھی رویے کا مظاہرہ کسی صاحبِ سنت کے ہاں پایا جائے، یا جسے وہ اس موقع کےلیے اَولیٰ اور اَنسب جانے، اس کے پیچھے لٹھ لے کر پڑ جانا ایک شدید غلط رویہ ہو گا۔ مثلاً:

1.   کسی صاحبِ سنت شخص نے اس (مرنے والے) کےلیے کوئی سرسری دعائیہ لفظ بول دیا، تو آپ چل پڑے اس کے ’سکرین شاٹ‘ لے لے کر اس (صاحبِ سنت شخص) کو کوسنے اور اس کی بھد اڑانے۔ یہ ایک انتہائی بچگانہ اور بےعلمی پر مبنی طرزِعمل ہے، جو کثرت سے دیکھنے میں آ رہا ہے۔

2.   اسی طرح یہ بھی ایک انتہائی غیر علمی طرزِ عمل ہو گا کہ کسی صاحبِ سنت نے اگر لوگوں کو اس موقع پر جذبات کی نذر ہوتے دیکھا، اور محسوس کیا کہ ایک نہایت غلط آدمی کو معاشرے میں وہ تکریم ملنے لگی ہے جو صرف خیر اور سنت پر مرنے والی کسی شخصیت کا حق ہوتا ہے؛ لہٰذا اس پر لوگوں کو تنبیہ کرنا ضروری جانا، جبکہ اس تنبیہ کرنے کے دوران لامحالہ اسے مرنے والے کے کچھ شر اور فساد کی نشان دہی بھی کر دینا پڑی، جس سے اس کا اصل مقصد "مرنے والے کی برائیاں کرنا" نہیں بلکہ عوامِ اہل سنت کو ایک ایسے غلط عمل سے روکنا ہے جو [[خیر اور سنت پر مرنے والوں]] اور [[شر اور بدعت پر مرنے والوں]] کا فرق ہی معاشرے میں ملیامیٹ کروا دے…یوں اس (صاحبِ سنت شخص) کے بیان میں مرنے والے کی کچھ مہلک خرابیوں کا بھی ذکر آ گیا… تو اس پر آپ چل پڑے اس (صاحبِ سنت شخص) کو ’انتہائی بےرحم‘، ’سنگدل‘، ’شدت پسند‘ اور ’دقیانوسی‘ ثابت کرنے! یعنی جس جس نے میڈیا کے بہائے ہوئے دھارے میں تیراکی اور غواصی کا کوئی اعلیٰ جوہر نہیں دکھایا، آپ شروع ہو گئے اسے ’انسان دشمن‘ ثابت کرنے بلکہ "انسانیت سے تہی" اور "رحم سے عاری" قرار دینے! یہاں یہ ذکر کر دینا خالی از فائدہ نہ ہو گا کہ "مرنے والے کی برائیاں نہ کرنے" کا حکم سلف کے ہاں ایک [[عموم]] پر ہی لیا گیا ہے۔ البتہ [[خاص احوال]] میں، کہ جہاں [[ظلم]] اور [[عدل]] کے پیمانے خلط ہو جانے کا اندیشہ ہو، اور جہاں [[سنت پر موت پانے]] اور [[ضلالت  پر جان دینے]] کا فرق نابود ہو جانے کا خدشہ ہو… یعنی جہاں مسلم معاشرے کے یہاں [[نیکی و نیکوکاروں کی توقیر]] اور [[بدی وبدکاروں کی عدم توقیر]] سے متعلقہ پیمانے درہم برہم ہو جانے کی صورت نظر آئے؛ جو کہ فی الحقیقت مسلم معاشرے کی موت ہے… ایسی [[خاص]] صورتحال میں وہ [[عمومی]] حکم برقرار نہ رہے گا۔ اس حقیقت کا انکار کرنے والے، سلف کے اس پورے تراث legacy  سے بیگانہ ہیں جو مسلم معاشرے میں ظلم اور فساد کی رمز symbolمانی جانے والی شخصیات کے پسِ مرگ ذکر سے متعلق سلف سے تسلسل کے ساتھ منقول ہے، اور جس سے ہماری تراث heritage  کی کتب بھری پڑی ہیں۔

3.   یا پھر اس پر "حیرت اور افسوس" کرنا کہ فلاں فلاں نے اپنے [عوامی] خطبے، یا بیان، یا پوسٹ، یا ٹویٹ وغیرہ کے ذریعے اس مرنے والے کےلیے کلمہٴ خیر تک نہیں بولا؛ دیکھو یہ کس قدر منفی اور اعلیٰ اخلاق کے منافی حرکت ہے! درحالیکہ اصحابِ سنت کی اکثریت ایسے موقعوں پر کچھ نہ بول کر ہی اپنا ایک موقف دیتی ہے؛ اور جو کہ ایسے مواقع کےلیے بہترین اور مناسب ترین موقف ہوتا ہے (یعنی مرنے والے کے متعلق کچھ بھی کہنے سے گریز کرنا)، تاوقتیکہ کچھ مخصوص دواعی آپ کے وہاں پر کچھ بولنے اور کہنے کا تقاضا نہ کر لیں۔

4.   ایک چوتھا طرزِ عمل جو ان میں شاید غلط ترین ہو، یہ کہ: شر اورفساد کی پہچان چلی آنے والی ایک شخصیت کےلیے کچھ ایسا والہانہ اہتمام اور کچھ ایسی زبردست تحسین کی جائے کہ ایک دیکھنے سننے والے کو لگے، گویا مرنے والا خیر اور سنت کے کسی بہت اعلیٰ مرتبے پر فائز تھا۔ یعنی [[خیر کی پہچان مانی جانے والی شخصیات]] اور [[شر کی پہچان مانی جانے والی شخصیات]] کو معاشرے میں عملاً یکساں کر دینا۔ یہ پوائنٹ چونکہ ضمناً پیچھے ذکر ہو چکا، لہٰذا اس کا اعادہ یہاں غیر ضروری ہے۔

*****

اس لحاظ سے ہم نے وہ تین رویّے بھی بیان کر دیے جن پر اصولی اعتراض نہیں بنتا۔ اور اس کے مقابلے پر وہ چار رویّے بھی نشان زد کر دیے جو اصولاً غلط اور مذموم ہیں۔ اب وہ تینوں (اصولاً درست) رویّے جو اوپر "اجتہاد" یا "صوابدید" کے حوالے سے مذکور ہوئے، چونکہ اپنی اپنی جگہ صحیح ہو سکتے ہیں… ان میں پایا جانے والا اختلاف یا تو [[تنوّع]] کے باب سے ہو گایا [[اجتہادی خطا و صواب]] کے باب سے؛ جس پر سرزنش یا مذمت بہرحال نہیں بنتی۔ لہٰذا ان تینوں مواقف کو – اصولاً – اہل سنت ہی کے مواقف جاننا چاہیے۔ آپ ان میں سے کوئی سا بھی اختیار کریں، باقیوں کو لتاڑنا اور ان کے لتے لینا، یہاں تک کہ اہلِ فساد کو چھوڑ کر اپنے ان بھائیوں ہی کے پیچھے پڑ جانا (فارغ مباش، کچھ کیا کر) خاصا غلط اور نقصان دہ رویّہ ہے۔ کوئی ضروری تو نہیں کہ اہل فساد میں سے کسی کے مرنے کے ساتھ ہی ہم آپس میں فساد شروع کر لیا کریں! اہل سنت اپنے تنوع یا اپنے اجتہاد سے ایک دوسرے کو مکمل کرتے ہیں نہ کہ ایک دوسرے کو کاٹتے ہیں۔

یقین کریں جب سے یہ "سوشل میڈیا" آیا ہے، جیسے ہی یہاں کوئی ایسا شخص مرتا ہے جس کی اہل اسلام کےلیے پرکاہ حیثیت نہیں ہوتی، اور جس پر اصحابِ سنت کا کوئی ایک منٹ ضائع ہونا آدمی کو گوارا نہیں ہو سکتا… "خبر" سننے کے ساتھ ہی جو ایک دھڑکا لگتا ہے وہ یہ کہ: خدایا خیر! فدائیانِ سنت کے مابین اس پر ایک نیا دنگا اور مورچہ بندی کی صورت سامنے نہ آ جائے! "کیا زمانے میں پنپنے کی یہی باتیں ہیں" حضرات؟

Print Article
Tagged
متعلقہ آرٹیکلز
بربہاریؒ ولالکائیؒ نہیں؛ مسئلہ ایک مدرسہ کے تسلسل کا ہے
Featured-
تنقیحات-
اصول- منہج
حامد كمال الدين
بربہاریؒ ولالکائیؒ نہیں؛ مسئلہ ایک مدرسہ کے تسلسل کا ہے تحریر: حامد کمال الدین خدا لگتی بات کہنا عل۔۔۔
اسلام کے انفرادی شعائر بھی اس وقت کافر کے نشانے پر ہیں
تنقیحات-
حامد كمال الدين
اسلام کے انفرادی شعائر بھی اس وقت کافر کے نشانے پر ہیں تحریر: حامد کمال الدین گزشتہ سے پیوستہ ۔۔۔
ایک بڑے شر کے مقابلے پر
Featured-
تنقیحات-
اصول- منہج
حامد كمال الدين
ایک بڑے شر کے مقابلے پر تحریر: حامد کمال الدین اپنے اس معزز قاری کو بےشک میں جانتا نہیں۔ لیکن سوال۔۔۔
ایک کافر ماحول میں "رائےعامہ" کی راہداری ادا کرنے والے مسلمان
راہنمائى-
احوال-
تنقیحات-
حامد كمال الدين
ایک کافر ماحول میں "رائےعامہ" کی راہداری ادا کرنے والے مسلمان تحریر: حامد کمال الدین چند ہفتے پیشتر۔۔۔
ایک خوش الحان کاریزمیٹک نوجوان کا ملک کی ایک مین سٹریم پارٹی کا رخ کرنا
احوال- تبصرہ و تجزیہ
تنقیحات-
اصول- منہج
حامد كمال الدين
ایک خوش الحان کاریزمیٹک نوجوان کا ملک کی ایک مین سٹریم پارٹی کا رخ کرنا تحریر: حامد کمال الدین کوئی ۔۔۔
سوویت دور کے افغان جہاد متعلق سفرالحوالی کی پوزیشن
Featured-
تنقیحات-
حامد كمال الدين
سوویت دور کے افغان جہاد متعلق سفرالحوالی کی پوزیشن حامد کمال الدین "المسلمون والحضارة الغربية" سے ۔۔۔
فيمنيزم كى جيت‘منشيات كى زيادتى سے خواتين كى موت ميں تين گُناہ اضافہ
تنقیحات-
دانيال حقيقت جو
فيمنيزم كى جيت‘منشيات كى زيادتى سے خواتين كى موت ميں تين گُناہ اضافہایک روایتی مسلم معاشرے میں ایک عام پچاس سا۔۔۔
اسلام اتنا لبرل کیوں نہیں؟
تنقیحات-
دانيال حقيقت جو
جب اسلام پر حملے کرنے والے ملحدوں، عیسائیوں، ہندوؤں اور صیہونیوں کی طرف نظر کریں تو ان کا بنیادی اعتراض یہ ہوت۔۔۔
کل جس طرح آپ نے فیصل آباد کے ایک مرحوم کا یوم وفات منایا
تنقیحات-
احوال-
حامد كمال الدين
کل جس طرح آپ نے فیصل آباد کے ایک مرحوم کا یوم وفات "منایا"! حامد کمال الدین قارئین کو شاید ا۔۔۔
ديگر آرٹیکلز
Featured-
تنقیحات-
اصول- منہج
حامد كمال الدين
بربہاریؒ ولالکائیؒ نہیں؛ مسئلہ ایک مدرسہ کے تسلسل کا ہے تحریر: حامد کمال الدین خدا لگتی بات کہنا عل۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
اسلام کے انفرادی شعائر بھی اس وقت کافر کے نشانے پر ہیں تحریر: حامد کمال الدین گزشتہ سے پیوستہ ۔۔۔
Featured-
تنقیحات-
اصول- منہج
حامد كمال الدين
ایک بڑے شر کے مقابلے پر تحریر: حامد کمال الدین اپنے اس معزز قاری کو بےشک میں جانتا نہیں۔ لیکن سوال۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
اہل فساد میں سے کسی کے مرنے پر "اہل صلاح" کا آپس میں فساد کرنا! تحریر: حامد کمال الدین کچھ ایسے لوگ ۔۔۔
احوال-
جہاد- مزاحمت
حامد كمال الدين
یاسین ملک… ہمتوں کو مہمیز دیتا ایک حوالہ تحریر: حامد کمال الدین یاسین ملک تم نے کسر نہیں چھوڑی؛&nb۔۔۔
راہنمائى-
احوال-
تنقیحات-
حامد كمال الدين
ایک کافر ماحول میں "رائےعامہ" کی راہداری ادا کرنے والے مسلمان تحریر: حامد کمال الدین چند ہفتے پیشتر۔۔۔
احوال- تبصرہ و تجزیہ
تنقیحات-
اصول- منہج
حامد كمال الدين
ایک خوش الحان کاریزمیٹک نوجوان کا ملک کی ایک مین سٹریم پارٹی کا رخ کرنا تحریر: حامد کمال الدین کوئی ۔۔۔
Featured-
تنقیحات-
حامد كمال الدين
سوویت دور کے افغان جہاد متعلق سفرالحوالی کی پوزیشن حامد کمال الدین "المسلمون والحضارة الغربية" سے ۔۔۔
تنقیحات-
دانيال حقيقت جو
فيمنيزم كى جيت‘منشيات كى زيادتى سے خواتين كى موت ميں تين گُناہ اضافہایک روایتی مسلم معاشرے میں ایک عام پچاس سا۔۔۔
تنقیحات-
دانيال حقيقت جو
جب اسلام پر حملے کرنے والے ملحدوں، عیسائیوں، ہندوؤں اور صیہونیوں کی طرف نظر کریں تو ان کا بنیادی اعتراض یہ ہوت۔۔۔
اصول- منہج
حامد كمال الدين
فقہ الموازنات پر ابن تیمیہ کی ایک عبارت وَقَدْ يَتَعَذَّرُ أَوْ يَتَعَسَّرُ عَلَى السَّالِكِ سُلُوكُ الط۔۔۔
تنقیحات-
احوال-
حامد كمال الدين
کل جس طرح آپ نے فیصل آباد کے ایک مرحوم کا یوم وفات "منایا"! حامد کمال الدین قارئین کو شاید ا۔۔۔
احوال-
حامد كمال الدين
’بندے‘ کو غیر متعلقہ رکھنا آپ کے "شاٹ" کو زوردار بناتا! حامد کمال الدین لبرلز کے ساتھ اپنے ا۔۔۔
بازيافت- سلف و مشاہير
حامد كمال الدين
"حُسینٌ منی & الحسن والحسین سیدا شباب أھل الجنة" صحیح احادیث ہیں؛ ان پر ہمارا ایمان ہے حامد۔۔۔
بازيافت- تاريخ
بازيافت- سيرت
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
ہجری، مصطفوی… گرچہ بت "ہوں" جماعت کی آستینوں میں! حامد کمال الدین ہجرتِ مصطفیﷺ کا 1443و۔۔۔
جہاد- مزاحمت
جہاد- قتال
حامد كمال الدين
صلیبی قبضہ کار کے خلاف چلی آتی ایک مزاحمتی تحریک کے ضمن میں حامد کمال الدین >>دنیا آپ۔۔۔
احوال-
حامد كمال الدين
مضمون کا پہلا حصہ پڑھنے کےلیے یہاں کلک کیجیےمزاحمتوں کی تاریخ میں کونسی بات نئی ہے؟ صلیبی قبضہ کار کے خلاف۔۔۔
حامد كمال الدين
8 دینداروں کے معاشرے میں آگے بڑھنے کو، جمہوریت واحد راستہ نہیں تحریر: حامد کمال الدین ۔۔۔
کیٹیگری
Featured
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
Side Banner
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
احوال
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
تبصرہ و تجزیہ
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اداریہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اصول
منہج
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ایقاظ ٹائم لائن
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
ذيشان وڑائچ
مزيد ۔۔۔
بازيافت
سلف و مشاہير
حامد كمال الدين
تاريخ
حامد كمال الدين
سيرت
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
باطل
فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
فرقے
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
تنقیحات
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ثقافت
معاشرہ
حامد كمال الدين
خواتين
حامد كمال الدين
خواتين
ادارہ
مزيد ۔۔۔
جہاد
مزاحمت
حامد كمال الدين
قتال
حامد كمال الدين
مزاحمت
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
راہنمائى
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
رقائق
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
فوائد
فہدؔ بن خالد
احمد شاکرؔ
تقی الدین منصور
مزيد ۔۔۔
متفرق
ادارہ
عائشہ جاوید
عائشہ جاوید
مزيد ۔۔۔
مشكوة وحى
علوم حديث
حامد كمال الدين
علوم قرآن
حامد كمال الدين
مریم عزیز
مزيد ۔۔۔
مقبول ترین کتب
مقبول ترین آڈيوز
مقبول ترین ويڈيوز