عربى |English | اردو 
Surah Fatiha :نئى آڈيو
 
Saturday, June 6,2020 | 1441, شَوّال 13
رشتے رابطہ آڈيوز ويڈيوز پوسٹر ہينڈ بل پمفلٹ کتب
شماره جات
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
تازہ ترين فیچر
Skip Navigation Links
نئى تحريريں
رہنمائى
نام
اى ميل
پیغام
2013-04 apniJamhuriat آرٹیکلز
 
مقبول ترین آرٹیکلز
’جمہوریت‘ کے پسِ پردہ!
:عنوان

’ہمارے والی‘ جمہوریت افراتفری برپا رکھنے کا ایک کامیاب انتظام ہے۔ اس عدم استحکام کے بے شمار نقصانات ہمارے حق میں اور بے شمار فوائد مغرب کے حق میں خودبخود حاصل ہوتے ہیں

. باطل :کیٹیگری
حامد كمال الدين :مصنف

فصل 7 کتابچہ: ’’اپنی جمہوریت یہ تو دنیا نہ آخرت‘‘

ایک ذہنی اور نفسیاتی حصار جو ہماری اِس ’جمہوریت‘ کی تہہ میں کارفرما ہے، تین وجوہات سے بےانتہا اہم ہے۔

پہلی اور بڑی وجہ: نظریاتی اور ثقافتی طور پر ہمارا مغرب کا دست نگررہنا؛ تاکہ ہماری جوان نسلیں پہلی نظر میں پہچان سکیں کہ ہمارا نظریاتی قبلہ کس طرف ہے اور سماجی معاملات میں ہمیں ’ہدایت‘ کہاں سے لینی ہے۔ ہمارے نونہال یہ سمجھنے میں دیر نہ لگائیں کہ ہماری اوقات اِس عالمی اسٹیج پر ایک نقال کی ہے؛  جس کی قابلیت کی آخری حد یہ ہے کہ وہ ایک  چلتے نظام کی کامیاب نقل ہی کرکے دکھادے اور جوکہ عام طور پر اس کے بس کی بات نہیں۔ اپنے بچوں پر مغرب کی امامت کی دھاک بٹھارکھنا ہمارے تعلیمی، ابلاغی اور سیاسی سیکٹر کو سونپے گئے مشن کا نہایت اہم حصہ ہے۔

 چنانچہ آج کسی قوم کا یہ کہنا کہ وہ جمہوریت اور جمہوری اقدار پریقین رکھتی ہے دراصل مغرب کو بڑا بھائی ماننے کا اعلان ہوتا ہے۔ یہ’ہینڈز اپ‘ کا ایک مہذب انداز ہے ۔ شاید آپ نے کبھی نوٹ کیا ہو، تیسری دنیا میں کسی حکمران کا تخت ڈولتا ہو تو وہ جھوٹ یا سچ جمہوریت کی تسبیح شروع کردیتا ہے اور بسا اوقات یہ ’وظیفہ‘ سود مند ثابت ہوتا ہے! کیا اس کی وجہ یہ ہے کہ مغرب کو غچہ دینا اتنا ہی آسان ہے ؟ نہیں۔ یہ مغرب کی سمجھداری کی دلیل ہے کہ وہ جمہوریت کی گردان سے تیسری دنیا کے حکمران کا اصل مقصد پالیتا ہے۔ یہ حکمران اپنے ملک میں پوری جمہوریت نافذ کرتا ہے یا آدھی یا ذرہ بھر نہیں،مغرب کو بھی اس سے کیا لگے۔ یہ دراصل وفاداری بشرط استواری کا اعلان ہوتا ہے۔ تھرڈورلڈ حکمرانوں کی زبان پر ’جمہوریت‘ کالفظ تو دراصل ایک خوبصورت کنا یہ ہوتا ہے؛ اصل مقصد مغرب کو یہ پیغام دینا ہوتا ہے کہ’فدوی حاضر ہے‘۔ ہم سمجھیں نہ سمجھیں مگر کہنے والا اور جس سے کیا گیادونوں اسکا مطلب سمجھ رہے ہوتے ہیں! تیسرا کوئی فریق سمجھنا چاہے تو بھی اجازت ہے!

چنانچہ عملی ثبوت دینا  یا نہ دینا بالکل الگ مسئلہ ہے، یہاں حکمران کا ’جمہوریت جمہوریت‘ پکارنا ہی دینِ مغرب میں آنے کا فدویانہ اظہار ہوتا ہے۔ اس قولِ لسان کے بغیر آدمی ’کفر‘ کا مرتکب[1] ہوسکتا ہے!

دوسری وجہ یہ کہ: ہم تیسری دنیا کو جو جمہوریت ملی ہے اس میں ہم استحکام  stability نامی چیز سے کوسوں دور رہتے ہیں۔ ’ہمارے والی‘ جمہوریت افراتفری برپا رکھنے کا ایک کامیاب انتظام ہے۔ اس عدم استحکام کے بے شمار نقصانات ہمارے حق میں اور بے شمار فوائد مغرب کے حق میں خودبخود حاصل ہوتے ہیں:

١۔  داخلی استحکام نہ ہونے کے باعث بیرونی سہاروں کی ہردم ضرورت رہتی ہے۔ جس کے باعث سب کھلاڑی میدان کے بجائے پویلین پر نظر رکھتے ہیں۔ نتیجتاً؛ اس گراؤنڈ کا سب سے نکما کھلاڑ ی وہ گنا جاتا ہے جوکھیل کے اصولوں پر توجہ دے اور اپنا رخ کھیل کے میدان سے اِدھراُدھر نہ ہونے دے۔ ایساکھلاڑی چاہے جتنا مرضی اچھا کھیلے مگر اس کااسکور حیران کن حد تک ایک خاص جگہ پر جاکر رک جاتا ہے!

٢۔ دوسری بات یہ کہ اس افراتفری کے عالم میں لوٹ کھسوٹ کا بازار گرم رہتا ہے۔ چورچور کے شور میں خود چور بھی آرام سے شامل ہوجاتا ہے۔ یو ں تو پچھلے سات عشروں سے یہی کچھ ہورہا ہے مگرپچھلی دو دہائیوں سے تو آپ نے محسوس کیا ہوگا شور ہی اب ’چورچور‘ کا ہے۔ آپ سوچیں کسی قوم کو نفسیاتی طور پر مفلوج کردینے کا اس سے اچھا گُر کیا ہوسکتا ہے۔ ہمارا معاشی استحصال بھی مغرب کے اہم اہداف میں شامل ہے۔

٣۔ تیسری بات یہ کہ افراتفری کی ایک ایسی فضا میں کوئی طویل المیعاد منصوبہ پنپ نہیں سکتا۔ تربیتی شعبے میں اور نہ سماجی عمل میں کوئی دور رس پروگرام انجام نہیں پاسکتا ہے۔ پیدآور افراد کو ایسے ماحول میں یکسوئی ملتی ہے اور نہ اداروں کو۔ کوئی بہت ہی غیر معمولی قوت ارادی کا مالک شخص یا ادارہ ہو تو شاید وہ  ایسی فضا میں کچھ کارکردگی دکھاسکے ورنہ سب جذبے اور سب منصوبے یونہی دھرے کے دھرے رہ جاتے ہیں۔

٤۔چوتھی بات یہ کہ اس صورتحال کی آڑ میں ہمارے وسائل بڑی خوبصورتی سے مغرب کو منتقل ہوتے چلے جاتے ہیں؛ جن میں سب سے قیمتی اثاثہ ہمارا باصلاحیت نوجوان ہے، یعنی برین ڈرین۔ کسی ملک کے انسانی اور قدرتی وسائل کو پائپ لگا کر ایک ہی سانس میں کھینچ جانا مغرب کو خوب آتاہے۔ حق یہ ہے کہ ہمارے حکمرانوں کی ٹیکس کلکٹری یا آئی ایم ایف کی ادائیگی اس کا بہت چھوٹا سا حصہ ہے بلکہ سامنے کی چیز۔ اب اس کام کےلئے یہاں ملٹی نیشنلز بیٹھی ہیں۔ این جی اوز کا ایک جال بچھا ہے۔ تعلیم و تحقیق اور ترقیاتی منصوبوں میں مدد کے روز نئے پیکج آتے ہیں۔ دیوہیکل منصوبوں پر بڑی بڑی بیرونی کمپنیاں ٹھیکے لیتی ہیں جن میں ہماری لالچ صرف اس قدر ہوتی ہے کہ ہم مزدوروں کو اس سے روزگار ملتا ہے! ایسے ایسے زبردست طریقے ہیں کہ آپ سن کرحیران رہ جاتے ہیں۔ وہ تو ہمارے خون کا آخری قطرہ نچوڑ لے جائیں مگرکچھ چھوڑ دینا خود ان کے بھی مفاد میں ہے۔ بس یہی سوچ کر وہ ہم پر کچھ ترس کھا جاتے ہیں ۔ مغربی قومیں انسان دوست بھی توہیں!

چنانچہ جمہوریت کے نام پر اس اندازِ اضطراب اور اِس دھما چوکڑی کا فائدہ یہ ہے کہ اس کے شور میں ہمارے چھوٹے چھوٹے چور ہی سر گرم عمل نہیں رہے جن کا ہماری زبانوں پر اب ایک عرصے سے خاصا چرچا ہے؛ بلکہ اس کی اوٹ میں جوبڑا بین الاقوامی چور پل رہا ہے وہ  شاید ہمارے خواب و خیال تک میں نہیں۔ جمہوریت کا یہ پردہ اصل میں تو اسے کام دیتا ہے۔

یہی وجہ ہے کہ ہم اپنے ملکوں میں یہ جو روز اودھم مچا دیکھتے ہیں اور یہ مسلسل ہنگامی حالت جو کہیں تھمنے میں نہیں آتی... یہ دھول دراصل کچھ بڑی بڑی عالمی وارداتوں کو چھپانے کےلئے اٹھائی جاتی ہے۔ گو پس منظر ہماری اپر کلاس بھی موج کرتی ہے مگر اصل میں تو مغرب کا دھندہ چلتا ہے ۔ ہم یہاں بوجھ ڈھونے اور فارغ وقت میں تالیاں بجانے کےلئے رکھے گئے ہیں!

اللہ کی طرف آئے بغیر واللہ کوئی چارہ نہیں!!!

٥۔ پانچویں بات یہ کہ ہماری قوم کا حساس طبقہ جو اس صورتحال کے اصل پس منظر سے تو واقف نہیں مگر اتنی سمجھ بہرحال رکھتا ہے کہ کسی عمل کو اس میں پائے جانےوالی ہاؤ ہو کی بجائے اس کے نتائج سے ماپے... ہمارا یہ سنجیدہ اور حساس طبقہ مایوسی کی طرف چلا جاتا ہے۔ اس طبقے کو اصلاح احوال کی کوئی صورت اور آگے بڑھنے کا کوئی راستہ سجھائی نہیں دیتا۔ کسی قوم کے سنجیدہ لوگ مایوسی کا شکار ہونے لگیں ، اس سے بڑا نقصان اس قوم کے حق میں کیا ہوگا۔ قوم کو اس کے جذباتی لوگوں نے تو نہیں چلانا ہوتا!

تیسری وجہ: جمہوریت کا یہ لفظ ایک اور بھی کمال دکھاتا ہے۔ کہنے کو ظاہر ہے مغر ب میں بھی جمہوریت ہے اور ہمارے ہاں بھی جمہوریت، مگر مغرب میں اسی جمہوریت سے دودھ کی نہریں بہتی ہیں اور ہمارے ہا ں خاک اڑتی ہے۔ اب ہمارا ایک عام فرد اس دردناک واقعہ کی بھلا کیا تفسیرکرے گا؟ یہی نا کہ:

’جمہوریت میں کوئی ایسی ہی خرابی ہوتی تو یہ مغربی اقوام کا بھی تو ویسا ہی حشر کرتی جو ہمارا یہاں ہورہا ہے۔ اس کا مطلب یہ ہوا کہ ہماری قوم ہی نالائق ہے! ایسی اعلی و ارفع چیز بھی ہماری قوم کو استعمال کرنی نہیں آتی! ایساشاندار نظام جو ہمارے سامنے یورپ کو اس کے تاریک دور سے نکال لایا حتی کہ اسے چاند پر پہنچا دیا ایسے زبردست نظام کا اس قوم نے دیکھو کیا ستیا ناس کیا‘!

حقیقت یہ ہے کہ آتے جاتے،  بسوں ویگنوں میں سفر کرتے، آپ کے کان پکنے کو آتے ہیں؛ اس مضمون کی گفتگو ہر جگہ آپ کا پیچھا کرتی ہے۔ ’صاحب ہم ایک ناکام قوم ہیں‘! اف خدایا!!! ترقی بھاڑ میں گئی؛ نہ ہو ترقی؛ مگر قوم کی اس مرعوبیت کا کیا حل ہے؟ ایک قوم اگر خود اعتمادی سے اِس حد تک محروم کردی جائے او ر وہ دوسری اقوام کے آگے اس درجہ دب جائے تو وہ تو جیتے جی مر جایا کرتی ہے۔ یہاں احساسِ کمتری مسلسل ہمارا تعاقب کرتا ہے۔ ہمارے دشمن کا ہم پر یہ نہایت کاری وار ہے جس کا مقصد ہمیں ذہنی اور نفسیاتی طور پر مفلوج کردینا ہے تاکہ ہم میں آگے بڑھنے کے جتنے محرکات ہوسکتے ہیں وہ سب کے سب ہمارے اندر ہی دم توڑجائیں؛ تب کبھی آپ مغرب کو مات دینے کی بات کریں تو اس پر دشمن سے پہلے آپ کی اپنی ہی قوم  کا قہقہہ سنائی دے! اقوامِ عالم سے آگے گزرنے کی بات ایک قوم کے ہاں کامیڈی کا بہترین مواد قرار پائے!

حضرات آپ کے دشمن کو آپ کے یہاں کیا اس کے سوا کچھ اور بھی چاہئے؟

یہ سب کام جمہوریت کی اِس بظاہر لایعنی گردان نے دکھایا ۔ ’جمہوریت‘ تو یہ واقعتاً وہ نہیں تھی جو مغرب میں ’نازل‘ ہوئی لیکن عرفِ عام میں اس کو ’جمہوریت‘ کہنے کے فائدے شمار سے باہر ہیں۔ آپ کے خیال میں لفظی مشابہت ایک بے ضرر چیز ہے؟ کچھ لوگوں کےلئے ضرور یہ بے ضرر ہوگی البتہ قومیں اس کے تباہ کن مضمرات کی متحمل نہیں۔ خود آپ نے دیکھا، اپنی اس آپ بیتی میں اصل جان اس ’لفظی مشابہت‘ ہی نے ڈالی ہے۔ ’لفظی مشابہت‘ کا کچھ مزید تذکرہ ابھی آئندہ فصل میں آتا ہے...

 



[1]  یہ ’کفر‘ عالم اسلام میں صرف عرب کے کچھ راجواڑوں کو معاف ہوتا ہے، تاہم عرب راجواڑوں سے اس کا جو ’کفارہ‘ لیا جاتا ہے وہ ہمارے تصور سے باہر ہے، ’اسٹیٹ آف ازرائیل‘ کا تحفظ اسی کا ایک حصہ ہے!

Print Article
Tagged
متعلقہ آرٹیکلز
شام میں حضرت عمر بن عبدالعزیزؒ کے مدفن کی بےحرمتی کا افسوسناک واقعہ اغلباً صحیح ہے
Featured-
احوال- وقائع
باطل- فرقے
حامد كمال الدين
شام میں حضرت عمر بن عبدالعزیزؒ کے مدفن کی بےحرمتی کا افسوسناک واقعہ اغلباً صحیح ہے حامد کمال الد۔۔۔
"المورد".. ایک متوازی دین
باطل- فرقے
Featured-
حامد كمال الدين
"المورد".. ایک متوازی دین حامد کمال الدین اصحاب المورد کے ہاں "کتاب" سے اگر عین وہ مراد نہیں۔۔۔
شیعہ سٹوڈنٹ کے ساتھ دوستی، شادی بیاہ
باطل- فرقے
حامد كمال الدين
شیعہ سٹوڈنٹ کے ساتھ دوستی، شادی بیاہ   سوال: السلام علیکم سر۔ یونیورسٹی میں ا۔۔۔
"انسان دیوتا" کے حق میں پاپ!
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
"انسان دیوتا" کے حق میں پاپ! حامد کمال الدین دین میں طعن کر لو، جیسے مرضی دین کے ثوابت ۔۔۔
ریاستی حقوق؛ قادیانیوں کا مسئلہ فی الحال آئین کے ساتھ
باطل- اديان
حامد كمال الدين
ریاستی حقوق؛ قادیانیوں کا مسئلہ فی الحال آئین کے ساتھ حامد کمال الدین اعتراض: اسلامی۔۔۔
ایک ٹھیٹ عقائدی تربیت ہماری سب سے بڑی ضرورت
اصول- منہج
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
اصول- عقيدہ
حامد كمال الدين
ایک ٹھیٹ عقائدی تربیت ہماری سب سے بڑی ضرورت حامد کمال الدین اسے فی الحال آپ ایک ناقص استقر۔۔۔
کچھ مسلم معترضینِ اسلام!
باطل- جدال
حامد كمال الدين
کچھ ’مسلم‘ معترضینِ اسلام! تحریر: حامد کمال الدین پچھلے دنوں ایک ٹویٹ میرے یہاں سے  ہو۔۔۔
فیمینسٹ جاہلیت کو جھٹلاتی ایک نسوانی تحریر
ثقافت- خواتين
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
ادارہ
فیمینسٹ جاہلیت کو جھٹلاتی ایک نسوانی تحریر اجالا عثمان انٹرنیٹ سے لی گئی ایک تحریر جو ہمیں ا۔۔۔
غامدى اور عصر حاضر ميں قتال
باطل- فرقے
اعتزال
ادارہ
ایک فیس بکی بھائی نے غامدی صاحب کی جہاد کے موضوع پر ویڈیو کا ایک لنک دے کر درخواست کی تھی کہ میں اس ویڈیو کو ۔۔۔
ديگر آرٹیکلز
Featured-
احوال- وقائع
باطل- فرقے
حامد كمال الدين
شام میں حضرت عمر بن عبدالعزیزؒ کے مدفن کی بےحرمتی کا افسوسناک واقعہ اغلباً صحیح ہے حامد کمال الد۔۔۔
جہاد- دعوت
عرفان شكور
كامياب داعيوں كا منہج از :ڈاكٹرمحمد بن ابراہيم الحمد جامعہ قصيم (سعودى عرب) ضرورى نہيں۔۔۔۔ ·   ضرور۔۔۔
باطل- فرقے
Featured-
حامد كمال الدين
"المورد".. ایک متوازی دین حامد کمال الدین اصحاب المورد کے ہاں "کتاب" سے اگر عین وہ مراد نہیں۔۔۔
جہاد-
احوال-
Featured-
حامد كمال الدين
’دوحہ‘ اہل اسلام کی ’جنیوا‘ سے بڑی جیت، ان شاء اللہ حامد کمال الدین ہمیں ’’زیادہ خوش نہ ہونے۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
اسلامی تحریک کا ’’مابعد تنظیمات‘‘ عہد؟ Post-organizations Era of the Islamic Movement یہ عن۔۔۔
حامد كمال الدين
باطل فرقوں کےلیے گنجائش پیدا کرواتے، دانش کے کچھ مغالطے   کچھ علمی چیزیں مانند (’’لازم المذھب لیس بمذھب‘۔۔۔
باطل- فرقے
حامد كمال الدين
شیعہ سٹوڈنٹ کے ساتھ دوستی، شادی بیاہ   سوال: السلام علیکم سر۔ یونیورسٹی میں ا۔۔۔
بازيافت- سلف و مشاہير
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
امارتِ حضرت معاویہؓ، مابین خلافت و ملوکیت نوٹ: تحریر کا عنوان ہمارا دیا ہوا ہے۔ از کلام ابن ت۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
سنت کے ساتھ بدعت کا ایک گونہ خلط... اور "فقہِ موازنات" حامد کمال الدین مغرب کے اٹھائے ہوئے ا۔۔۔
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
"انسان دیوتا" کے حق میں پاپ! حامد کمال الدین دین میں طعن کر لو، جیسے مرضی دین کے ثوابت ۔۔۔
بازيافت-
حامد كمال الدين
تاریخِ خلفاء سے متعلق نزاعات.. اور مدرسہ اہل الأثر حامد کمال الدین "تاریخِ خلفاء" کے تعلق س۔۔۔
باطل- اديان
حامد كمال الدين
ریاستی حقوق؛ قادیانیوں کا مسئلہ فی الحال آئین کے ساتھ حامد کمال الدین اعتراض: اسلامی۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
لفظ  "شریعت" اور "فقہ" ہم استعمال interchangeable    ہو سکتے ہیں ۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
ماتریدی-سلفی نزاع، یہاں کے مسلمانوں کو ایک نئی آزمائش میں ڈالنا حامد کمال الدین ایک اشع۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
منہجِ سلف کے احیاء کی تحریک میں ’مارٹن لوتھر‘ تلاش کرنا! حامد کمال الدین کیا کوئی وجہ ہے کہ۔۔۔
احوال-
حامد كمال الدين
      کشمیر کاز، قومی استحکام، پختہ اندازِ فکر کی ضرورت حامد ۔۔۔
تنقیحات-
مشكوة وحى- علوم حديث
حامد كمال الدين
اناڑی ہاتھ درایت! صحیح مسلم کی ایک حدیث پر اٹھائے گئے اشکال کے ضمن میں حامد کمال الدین ۔۔۔
راہنمائى-
حامد كمال الدين
(فقه) عشرۃ ذوالحج اور ایامِ تشریق میں کہی جانے والی تکبیرات ابن قدامہ مقدسی رحمہ اللہ کے متن سے۔۔۔
کیٹیگری
Featured
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
Side Banner
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
احوال
وقائع
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اداریہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اصول
عقيدہ
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ایقاظ ٹائم لائن
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
ذيشان وڑائچ
مزيد ۔۔۔
بازيافت
سلف و مشاہير
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
حامد كمال الدين
ادارہ
مزيد ۔۔۔
باطل
فرقے
حامد كمال الدين
فرقے
حامد كمال الدين
فرقے
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
تنقیحات
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ثقافت
معاشرہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
خواتين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
جہاد
دعوت
عرفان شكور
حامد كمال الدين
مزاحمت
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
راہنمائى
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
رقائق
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
فوائد
فہدؔ بن خالد
احمد شاکرؔ
تقی الدین منصور
مزيد ۔۔۔
متفرق
ادارہ
عائشہ جاوید
عائشہ جاوید
مزيد ۔۔۔
مشكوة وحى
علوم حديث
حامد كمال الدين
علوم قرآن
حامد كمال الدين
مریم عزیز
مزيد ۔۔۔
مقبول ترین کتب
مقبول ترین آڈيوز
مقبول ترین ويڈيوز