عربى |English | اردو 
Surah Fatiha :نئى آڈيو
 
Saturday, March 28,2020 | 1441, شَعْبان 3
رشتے رابطہ آڈيوز ويڈيوز پوسٹر ہينڈ بل پمفلٹ کتب
شماره جات
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
تازہ ترين فیچر
Skip Navigation Links
نئى تحريريں
رہنمائى
نام
اى ميل
پیغام
2015-04 آرٹیکلز
 
مقبول ترین آرٹیکلز
مسلم اجتماعیت پر جدت پسندوں کا دھاوا
:عنوان

اسلام کے نام پر اگر آپ کوئی ’’ملک‘‘ ہی بنا بیٹھے ہیں اور اپنی اس حرکت کو آپ نے اسلامی زندگی گزارنے کا کوئی تقاضا سمجھ لیا تھا تو بھی اسلام کے اِن نئے مبلغین کے نزدیک آپ ایک صریح جہالت کے مرتکب ہوئے!

:کیٹیگری
حامد كمال الدين :مصنف

آج جب دنیا کی قومیں ’’مسلمان‘‘ کو __  ایک اجتماعی واقعے کے طور پر  __  صفحۂ ہستی سے مٹانے کے درپے ہیں... ہمیں کچھ ایسے بےطرح unprecedented  ’اسلامی‘ افکار کا سامنا ہے جو ہماری ’’مسلم اجتماعیت‘‘ پر اندرون سے حملہ آور ہیں۔ اس نئے ڈسکورس کی رُو سے: شریعت نہ کسی ’’مسلم ملک‘‘ کی متقاضی ہے اور  نہ  کسی ’’مسلم امت‘‘ کی۔ نہ مسلمانوں کی ’’مقامی وحدت‘‘ ہرگز ہرگز دین کا کوئی تقاضا؛ اور نہ ’’عالمی وحدت‘‘!

صرف اتنا نہیں کہ یہ ٹولہ ’’خلافت‘‘ ایسی کسی غیرموجود چیز کے قیام پر ہی معترض ہے۔ نہیں۔  اسلام کے نام پر اگر آپ کوئی ’’ملک‘‘ ہی بنا بیٹھے ہیں اور اپنی اس حرکت کو آپ نے اسلامی زندگیگزارنے کا کوئی تقاضا سمجھ لیا تھا تو بھی اسلام کے اِن نئے مبلغین کے نزدیک آپ ایک صریح جہالت کے مرتکب ہوئے۔ یہ خیال کہ اسلامی زندگی گزارنے کےلیے آپ کو کافروں سے آزاد ایک جداگانہ ملک کی ضرورت ہے جہاں ریاستی عمل خدا کی عبادت کرنے اور کروانے کا پابند ہو، یہ تصور ہی اِن حضرات کے نزدیک شریعت کے خلاف ہے۔ بلکہ فساد کا پیش خیمہ۔ مسلمان نام کی دنیا میں کوئی قوم بھی ہوتی ہے، انسانوں کی کسی اجتماعی وحدت کی بنیاد ’’دین‘‘ بھی ہو سکتا ہے، یہ بات ہی اِن کے نزدیک فرسودہ ہے۔ چینلوں پر حاوی یہ طبقہ، جس کی بات عام آدمی کو ذرا مشکل سے سمجھ آتی ہے، تکلف سے کام نہ لے، تو ’’نظریۂ پاکستان‘‘ پورے کا پورا اِس کے ڈسکورس کی رُو سے  باطل اور لغو ہے؛ کیونکہ نظریۂ پاکستان کے تحت اسلامیانِ ہند نے:

ü        اپنی اجتماعی پہچان دنیا میں ’’مسلمان‘‘ کے طور پر کروائی تھی؛ اور اس کے علاوہ ہر پہچان مسترد کر دی تھی۔

ü        ’’قوم‘‘ (یعنی اپنی اجتماعیت) کی بنیاد ’’دین‘‘ کو مانا تھا۔

ü        پھر اس بنیاد پر؛ یہ ’’مسلمان قوم‘‘ ہندو سے علیحدگی اختیار کرنے چل دی تھی۔ (دورِتہذیب میں ایسی پسماندہ حرکت!)

ü        نیز اپنی اجتماعی زندگی اسلام کی تعلیمات کے مطابق گزارنے کےلیے؛ اس نے ایک علیحدہ خودمختار ’’ملک‘‘ کا تقاضا کر ڈالا تھا۔

یہ سب باتیں اِس نئی ’اسلامی تحقیق‘ کی رُو سے بےبنیاد ہیں۔ ’’مسلمان‘‘ نہ کوئی امت ہوتی ہے۔ نہ کوئی ملک ہوتا ہے۔ اور نہ کوئی قوم ہوتی ہے۔ ’’مسلمان‘‘ کی یہ سب حیثیتیں اس کے نزدیک شریعت کی غلط تفسیرات کا نتیجہ ہے! اسلام کا کل تعلق ’’فرد‘‘ سے ہے... اور بس!

اُن تمام اسلامی تحریکوں اور کوششوں کو فساد کی جڑ ٹھہراتے ہوئے جو اسلام کےلیے کسی ملک یا ریاست کی بات کرتی رہی ہیں، اور جن میں بلاشبہ تحریک پاکستان بھی آتی ہے... اِن کے ایک ٹولے نے روزنامہ جنگ کے اسٹیج سے اپنا ایک نیریٹو narrative  بھی جاری کر ڈالا۔  جس پر پوری قوم چیخ کر رہ گئی۔ قریب قریب ہر دینی طبقے کی جانب سے اس پر شدید ترین ردعمل آ چکا۔ یہ نیریٹو  narrative ان گنت موضوعات پر جماعۃ المسلمین کی راہ سے انحراف کےلیے سنگ بنیاد فراہم کرتا ہے۔ تاہمزیرِنظر کتابچہ اِس فتنے کی صرف ایک جہت سے بحث کرتا ہے اور وہ ہے  اس کا ’’مسلم اجتماعیت‘‘ کے خلاف اٹھایا ہوا کہرام۔

ہماری یہ گفتگو ’’اسلام میں فردپرست نظریات کے پھیلاؤ‘‘ پر عمومی جہت سے ہے۔ وحیدالدین&المورد چونکہ اس تحریک کے روح رواں ہیں لہٰذا کہیں کہیں اس کا خصوصی ذکر آگیا ہے۔ ورنہ یہ گفتگو ’’فردپرست نظریات کے فروغ‘‘ پر ایک عمومی سیاق ہی میں کی گئی ہے۔

*****

یہ درست ہے کہ شریعت کی دعوت دینے والا سیکٹر اس وقت اپنی تاریخ کی مشکل ترین صورتحال سے گزر رہا ہے: ایک طرف شدت پسندوں کا افراط اور غلو؛ تو دوسری طرف جدت پسندوں کی تفریط اور جفا۔شدت پسندوں کی جانب سے فراہم کرائے گئے اس ’نادر موقع‘ سے فائدہ اٹھاتے ہوئے؛ جدت پسند بلاشبہ شیر ہوگئے اور اپنا مدعا کھل کر کہنے لگے ہیں۔ نیز لبرلزم دندنانے لگا۔ لیکن ہر واقعہ کوئی نہ کوئی خیر بھی لاتا ہے۔ ہماری نظر میں لبرلوں اور جدت پسندوں کی چھیڑی ہوئی ان بحثوں سے شریعت کے داعیوں کے ہاں یہ موضوعات ان شاءاللہ کچھ مزید نکھر آئیں گے }خصوصاً احکامِ اضطرار اور احکامِ اصلیہ کے مابین فرق کرنے کی بابت (اس کا کچھ بیان فصل ’’جماعت و امارت... فقہاء کا پیراڈائم‘‘ میں ہوا ہے){۔

پس کیا بعید اہل غلو کی اٹھائی ہوئی اس گرد کے بیٹھ جانے کے ساتھ ہی جب یہ لبرل بھی منظرنامے سے غائب ہو جائیں گے (ان شاءاللہ)، تب شریعت کے داعی طبقے کسی روشن شاہراہ پر کھڑے ہوں؛ اور کیا بعید نہایت تھوڑے وقت میں ہم یہاں ایک نیا زوردار قافلہ اسلامیانِ ہند کو پار لگانے کے عزم کے ساتھ رواں دواں دیکھنے لگیں۔ وما ذلك على الله بعزيز

*****

زیادہ تر، یہ ہماری گزشتہ تحریروں کے منتخب حصے ہیں، جو کچھ ترمیم و اضافہ کے ساتھ یہاں دیے جا رہے ہیں۔ چند اقتباسات ہماری ان تحریروں سے بھی ہیں جو اپنی ترتیب سے مستقبل کی کسی اشاعت میں آنا تھیں۔ افادۂ عام کی خاطر؛ یہ مختصر مضامین ہیں۔ تفصیل میں جانے کی گنجائش اغلباً کسی بھی فریق کے پاس نہیں ہے!

*****

 

Print Article
Tagged
متعلقہ آرٹیکلز
ديگر آرٹیکلز
باطل- فرقے
Featured-
حامد كمال الدين
"المورد".. ایک متوازی دین حامد کمال الدین اصحاب المورد کے ہاں "کتاب" سے اگر عین وہ مراد نہیں۔۔۔
جہاد-
احوال-
Featured-
حامد كمال الدين
’دوحہ‘ اہل اسلام کی ’جنیوا‘ سے بڑی جیت، ان شاء اللہ حامد کمال الدین ہمیں ’’زیادہ خوش نہ ہونے۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
اسلامی تحریک کا ’’مابعد تنظیمات‘‘ عہد؟ Post-organizations Era of the Islamic Movement یہ عن۔۔۔
حامد كمال الدين
باطل فرقوں کےلیے گنجائش پیدا کرواتے، دانش کے کچھ مغالطے   کچھ علمی چیزیں مانند (’’لازم المذھب لیس بمذھب‘۔۔۔
باطل- فرقے
حامد كمال الدين
شیعہ سٹوڈنٹ کے ساتھ دوستی، شادی بیاہ   سوال: السلام علیکم سر۔ یونیورسٹی میں ا۔۔۔
بازيافت- سلف و مشاہير
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
امارتِ حضرت معاویہؓ، مابین خلافت و ملوکیت نوٹ: تحریر کا عنوان ہمارا دیا ہوا ہے۔ از کلام ابن ت۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
سنت کے ساتھ بدعت کا ایک گونہ خلط... اور "فقہِ موازنات" حامد کمال الدین مغرب کے اٹھائے ہوئے ا۔۔۔
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
"انسان دیوتا" کے حق میں پاپ! حامد کمال الدین دین میں طعن کر لو، جیسے مرضی دین کے ثوابت ۔۔۔
بازيافت-
حامد كمال الدين
تاریخِ خلفاء سے متعلق نزاعات.. اور مدرسہ اہل الأثر حامد کمال الدین "تاریخِ خلفاء" کے تعلق س۔۔۔
باطل- اديان
حامد كمال الدين
ریاستی حقوق؛ قادیانیوں کا مسئلہ فی الحال آئین کے ساتھ حامد کمال الدین اعتراض: اسلامی۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
لفظ  "شریعت" اور "فقہ" ہم استعمال interchangeable    ہو سکتے ہیں ۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
ماتریدی-سلفی نزاع، یہاں کے مسلمانوں کو ایک نئی آزمائش میں ڈالنا حامد کمال الدین ایک اشع۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
منہجِ سلف کے احیاء کی تحریک میں ’مارٹن لوتھر‘ تلاش کرنا! حامد کمال الدین کیا کوئی وجہ ہے کہ۔۔۔
احوال-
حامد كمال الدين
      کشمیر کاز، قومی استحکام، پختہ اندازِ فکر کی ضرورت حامد ۔۔۔
تنقیحات-
مشكوة وحى- علوم حديث
حامد كمال الدين
اناڑی ہاتھ درایت! صحیح مسلم کی ایک حدیث پر اٹھائے گئے اشکال کے ضمن میں حامد کمال الدین ۔۔۔
راہنمائى-
حامد كمال الدين
(فقه) عشرۃ ذوالحج اور ایامِ تشریق میں کہی جانے والی تکبیرات ابن قدامہ مقدسی رحمہ اللہ کے متن سے۔۔۔
تنقیحات-
ثقافت- معاشرہ
حامد كمال الدين
کافروں سے مختلف نظر آنے کا مسئلہ، دار الکفر، ابن تیمیہ اور اپنے جدت پسند حامد کمال الدین دا۔۔۔
اصول- منہج
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
اصول- عقيدہ
حامد كمال الدين
ایک ٹھیٹ عقائدی تربیت ہماری سب سے بڑی ضرورت حامد کمال الدین اسے فی الحال آپ ایک ناقص استقر۔۔۔
کیٹیگری
Featured
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
Side Banner
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
احوال
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اداریہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اصول
عقيدہ
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ایقاظ ٹائم لائن
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
ذيشان وڑائچ
مزيد ۔۔۔
بازيافت
سلف و مشاہير
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
حامد كمال الدين
ادارہ
مزيد ۔۔۔
باطل
فرقے
حامد كمال الدين
فرقے
حامد كمال الدين
فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
تنقیحات
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ثقافت
معاشرہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
خواتين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
جہاد
حامد كمال الدين
مزاحمت
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
راہنمائى
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
رقائق
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
فوائد
فہدؔ بن خالد
احمد شاکرؔ
تقی الدین منصور
مزيد ۔۔۔
متفرق
ادارہ
عائشہ جاوید
عائشہ جاوید
مزيد ۔۔۔
مشكوة وحى
علوم حديث
حامد كمال الدين
علوم قرآن
حامد كمال الدين
مریم عزیز
مزيد ۔۔۔
مقبول ترین کتب
مقبول ترین آڈيوز
مقبول ترین ويڈيوز