عربى |English | اردو 
Surah Fatiha :نئى آڈيو
 
Sunday, November 18,2018 | 1440, رَبيع الأوّل 9
رشتے رابطہ آڈيوز ويڈيوز پوسٹر ہينڈ بل پمفلٹ کتب
شماره جات
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
تازہ ترين فیچر
Skip Navigation Links
نئى تحريريں
رہنمائى
نام
اى ميل
پیغام
weekly آرٹیکلز
 
مقبول ترین آرٹیکلز
مولوی تکفیر نہ کرکے سیکولر کو ’مایوس‘ کررہا ہے!
:عنوان

سیکولر جان بوجھ کر بہت کچھ کہہ دیتےہیں کہ ایک آدھ مولوی ہی انکےخلاف فتوی ڈال دیں! دین کےبڑےبڑے حساس مقامات کو چھیڑنا تاکہ کسی1مولوی کوہی جلال آجائے لیکن مولوی سمجھدار ہوچکا، انکی یہ خواہش اب وہ پوری نہیں کررہا!

. باطلكشمكش :کیٹیگری
ذيشان وڑائچ :مصنف
مولوی تکفیر نہ کرکے سیکولر کو ’مایوس‘ کررہا ہے!

آج کل جدت پسندی کی ایک نئی رو چلی ہے… کہ مولویوں پر الزام لگایا جائے کہ وہ خواہ مخواہ تکفیر کرتے پھرتے ہیں۔  گو یا ہر طرف تکفیر کا گھناؤنا چہر ہ سراُٹھائے کھڑا ہے۔ ان جدت پسند دانشوروں کی تحریر سے ایسا محسوس ہوتا کہ جدھر دیکھو کوئی مولوی کسی کی تکفیر کے لئےبے تاب۔ آپ ذرا سا اختلاف کریں کوئی آپ کو کافر قرار دینے پر تلا ہوا ہے۔دنیا کا ہر مولوی دوسرے مولوی کو کافر قرار دیتا ہے۔ مسلمان کا ہر فرقہ گویا کہ دوسرے فرقے کے نزدیک کافر ہے۔ حنفی اپنے علاوہ تمام مسلکوں کا کافر مانتا ہے۔ اہل حدیث تمام مقلدوں کو کافر قرار دیتا ہے۔ طالبان اپنے علاوہ باقی سب کے کفر کا فتوی دیتے ہیں۔وغیرہ وغیرہ۔
گویا کہ پورے معاشرے کو تکفیریوں نے ہائی جیک کیا ہوا ہے۔
لیکن کیا واقعی میں یہ حقیقت ہے…؟ کیا پچھلے کچھ سالوں میں پاکستانی معاشرے آپ نے  ایک بھی قابل ذکرکفر کا فتوی سنا ہے…؟ کم از کم ہمارے علم میں ایسا کوئی فتوی سرے سے پایا نہیں جاتا۔ اور اگر کہیں پر کسی کونے کھدرے سے ایسا فتوی دیا بھی گیا ہو تو وہ پاکستان کے معاشرتی دھارے میں نہ نافذ ہوا، نہ معلوم ہوا اور نہ ہی مقبول ہوا بلکہ وہ  پاکستان کے کٹر سے کٹر دینی طبقے میں پایا ہی نہیں گیا۔
تو جناب پھر یہ کونسےتکفیری فتوے ہیں  جو ہے تو نہیں لیکن ان کا شور اتنا زیادہ ہے کہ کان پڑی آواز سنائی نہیں دیتی؟ اس تکفیر کے نقار خانے میں کیوں جدت پسند  سیکولرز حضرات ممیاتے پھر رہے ہیں کہ “دیکھو مجھے کافر کہتاہے………!!!” اصل مسئلہ کیا ہے؟؟
مسئلہ کچھ یوں معلوم پڑتا ہے کہ مولوی اب ذرا چالاک ہوگیا ہے… سیکولر جدت پسندوں کو اپنے مکالمے کے لئے کوئی بنیادیں نہیں مل رہی ہیں۔ تکفیر تو دور کی بات مولوی نے اب فتوے کی زبان میں بات کرنا ہی بند کردیا ہے۔ فکری مکالمے  سیکولر جدت پسندوں کے دانت کھٹے کر رہے ہیں۔ ان سیکولر جدت پسندوں کے لئے فکری اور عقلی بحث میں اپنی بات میں وزن پیدا کرنے کے لیے مظلومیت کا تڑکا بہت ضروری تھا۔ اب یہ ہتھیار ان کے ہاتھوں سے نکل رہا ہے۔اب یہ سیکولر جان بوجھ کر بہت کچھ کہہ دیتے ہیں کہ ایک آدھ مولوی ہی ان کے خلاف فتوی ڈال لے تا کہ مظلومیت کا ناٹک کھیلا جاسکتے۔ بڑی بڑی اور حساس باتوں پر تبصرہ کیا جاتا ہے کہ کسی ایک مولوی کوہی جلال آجائے اور ایک آدھ فتوی ہی جاری ہوجائے۔ لیکن مولوی ہے کہ فتوی دینے میں نہیں آرہا ہے!
ویسے تو اس میں کوئی شک نہیں کہ تکفیر جیسے نازک مسئلہ کو عموم دیا جائے اور اس پر  ہمارے دینی حلقے کو بہت زیادہ فکر مند بھی ہونا چاہئے۔ لیکن جو لوگ دین کو اجتماعی زندگی سے ہی باہر نکالنے پر تلے ہوئے ہیں انہیں تکفیر سے پریشانی ہونا سمجھ میں نہیں آتا۔ بلکہ اب باقاعدہ اعلان شدہ ملحدین جو خدا  کےوجود پر ہی پھبتیاں کستے ہیں اور رسول کی رسالت کے بارے میں عجیب و غریب شکوک و شبہات پھلانے کی کوشش کرتے ہیں انہیں اس ’فتنہ تکفیر‘ سے  بہت زیادہ تکلیف ہورہی ہے۔ اور وہ بھی تکفیر کا ایسا فتنہ جو معاشرے میں سرے سے پایا ہی نہیں جاتا…؟ حالانکہ انکی سیکولر اخلاقیات کا تقاضا تو یہ تھا کہ کوئی تکفیر کرے نہ کرے ان کو تو اپنی امانت داری ثابت کرنے کے لئے خود سے اعلان کرنا چاہئے تھا کہ “میں کافر ہوں”۔ لیکن یہ خود سے کفریہ باتیں، ملحدانہ نکات بلکہ توہین رسالت تک  کر کر کے یہ چاہ رہے ہیں کہ دینی حلقے ان کے کفر کا فتوی دیں اور پھر یہ اس پر اپنی مظلومیت کا رونا رونے لگیں کہ دیکھو “مولوی مجھے کافر کہتا ہے” یا ” دیکھو میرے خلاف فتوی دیا جاتا ہے” اور اب مولوی فتوی دینے سے بھی رہ جاتا ہے تو اپنی مظلومیت کا جھوٹا ڈرامہ کیا جارہا ہے۔ یہ تکفیر کی مظلومیت گویا کہ پروپیگنڈے کی دھند  ہے جس میں کچھ بھی صاف دکھائی نہ دے ۔ ایک ملحد دین کے خلاف کچھ بھی بکے اور اس دھندلاہٹ سے پھر بھی سرخ رو ہوکر نکلے۔ یا ایک پیش بندی ہے کہ آئندہ کوئی کچھ بھی بدزبانی کرے اور کسی کو ہمت نہ ہو کہ کسی کو کافر قرار دے۔تکفیر کے نظریے کو معاشرے سے نکالنے کی پوری تیاری ہے۔ ظاہر ہے کفر ہی نہ ہوگا تو اسلام اور کفر کو خلط ملط کرنا انتہائی آسان ہوجائے گا۔ اس پورے ڈسکورس کے اصل ڈانڈے اس سیکولر ہیومنزم کی سازش سے جاملتے ہیں جہاں انسانیت کے نام پر ملتوں کا فرق کو ہی مٹادیا جائے۔
جب ایک جمہوریت کا دعوے دار جمہوریت کے خلاف بات کرے تو آپ اس پر الزام لگاتے ہیں کہ یہ بندہ غیر جمہوری ہے۔ جب ایک سیکولرزم کا دعوےدار سیکولر اصولوں کے خلاف جائے تو آپ اس پر اس کی گرفت کرتے ہیں کہ تم حقیقت میں سیکولر نہیں ہو اور تمہارے سیکولرزم کا دعوی جھوٹا ہے۔ ایک انسان پرست انسان پرستی کے خلاف بات کرے تو اسے بھی ہیومنزم کے دائرے سے نکال باہر کیا جاتا ہے۔ ایک سائنس پرست انٹلی جنٹ ڈیزائن کی بات کرے تو فوراً اسے سائنس کے دائرے سے نکال باہر کیا جائے گا قطع نظراس سے کہ  وہ اپنے دعوے کے لئے جو بھی”سائنسی ” دلیل دے۔ لیکن ان ملحدوں  کا مطالبہ ہے کہ وہ اسلام کے خلاف کچھ بھی کہیں وہ اپنے نام کے ساتھ معاشرے میں مسلم ہی رہیں گے بلکہ اسلام کے نام پر اپنے الحادی عقائد کی تبلیغ بھی کرتے  رہیں گے بلکہ اگر کوشش کے باوجود ان پر کفر فتوی نہیں داغا گیا تو بھی اپنے جھوٹی مظلومیت کا ڈرامہ کر کے نمبر حاصل کرتے رہیں گے۔

اسلام کی اپنی تعلیمات ہیں اور ان میں کچھ ضروریات دین ہیں جن کے دائرے سے نکلنے سے ایک فرد سچ مچ کافر ہوجاتا ہے۔ تو جناب تکفیر کے اس عموم سے ہم کراہت ضرور رکھتے ہیں لیکن سچ مچ کی تکفیر ہوتی بھی ہے اور تکفیر کی یہ تلوارضرور ملحدوں کے سروں  پر لٹکتی رہے گے۔ اور جب کسی کے سر پر پڑی ہے تو جناب وہاں بھٹو جیسا سیکولر  بھی کچھ کرنے کے بجائے مسلمانوں کی حمایت کرنے پر مجبور ہوگیا تھا۔

Print Article
Tagged
متعلقہ آرٹیکلز
کچھ مسلم معترضینِ اسلام!
Featured-
باطل- جدال
حامد كمال الدين
کچھ ’مسلم‘ معترضینِ اسلام! تحریر: حامد کمال الدین پچھلے دنوں ایک ٹویٹ میرے یہاں سے  ہو۔۔۔
فیمینسٹ جاہلیت کو جھٹلاتی ایک نسوانی تحریر
Featured-
ثقافت- خواتين
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
ادارہ
فیمینسٹ جاہلیت کو جھٹلاتی ایک نسوانی تحریر اجالا عثمان انٹرنیٹ سے لی گئی ایک تحریر جو ہمیں ا۔۔۔
غامدى اور عصر حاضر ميں قتال
باطل- فرقے
اعتزال
ادارہ
ایک فیس بکی بھائی نے غامدی صاحب کی جہاد کے موضوع پر ویڈیو کا ایک لنک دے کر درخواست کی تھی کہ میں اس ویڈیو کو ۔۔۔
زیادتی زیادتی میں فرق ہے
باطل- فرقے
احوال- وقائع
حامد كمال الدين
حامد کمال الدین ایک بڑی خلقت واضح واضح اشیاء میں بھی فرق کرنے کی روادار نہیں۔ مگر تعجب ہ۔۔۔
دین پر کسی کا اجارہ نہ ہونا.. تحریف اور من مانی کےلیے لائسنس؟
باطل- كشمكش
حامد كمال الدين
تحریر: حامد کمال الدین کہتا ہے میں اوپن ایئر میں کیمروں کے آگے جنازے کی اگلی صف کے اندر ۔۔۔
اب اس کےلیے اہلِ دین آپس میں الجھیں!؟
احوال-
باطل- شخصيات و انجمنيں
حامد كمال الدين
حامد کمال الدین ’’تنگ نظری‘‘ کی ایک تعریف یہ ہو سکتی ہے کہ: ایک چیز جس کی دین میں گنجائش۔۔۔
شرک کے تہواروں پر مبارکباد دینے والے حضرات کے دلائل، ایک مختصر جائزہ
باطل- اديان
شیخ خباب بن مروان الحمد
شرک کے تہواروں پر مبارکباد دینے والے حضرات کے دلائل، ایک مختصر جائزہ تحریر: شیخ خباب بن مروان ا۔۔۔
دیوالی کی مٹھائی
باطل- اديان
حامد كمال الدين
دیوالی کی مٹھائی تحریر: سرفراز فیضی(داعی: صوبائی جمعیت اہل حدیث ممبئی ) *سوال*: کیا دیوالی کی مبارک باد دینا ۔۔۔
بائیکاٹ کا ہتھیار.. اور قومی یکسوئی کا فقدان
احوال-
باطل- كشمكش
تنقیحات-
حامد كمال الدين
بائیکاٹ کا ہتھیار.. اور قومی یکسوئی کا فقدان ہر بار جب کسی دردمند کی جانب سے مسلم عوام کو بائیکاٹ کا ۔۔۔
ديگر آرٹیکلز
Featured-
باطل- جدال
حامد كمال الدين
کچھ ’مسلم‘ معترضینِ اسلام! تحریر: حامد کمال الدین پچھلے دنوں ایک ٹویٹ میرے یہاں سے  ہو۔۔۔
اصول- منہج
تنقیحات-
Featured-
حامد كمال الدين
پراپیگنڈہ وار propaganda war میں سیگ منٹیشن segmentation (جزء کاری) ناگزیر ہوتی ہے۔ یعنی معاملے کو ای۔۔۔
بازيافت-
ادارہ
ہجرت کے پندرہ سو سال بعد! حافظ یوسف سراج کون مانے؟ کسے یقیں آئے؟ وہ چار قدم تاریخِ ان۔۔۔
تنقیحات-
Featured-
حامد كمال الدين
میرے اسلام پسندو! پوزیشنیں بانٹ کر کھیلو؛ اور چال لمبی تحریر: حامد کمال الدین یہ درست ہے کہ۔۔۔
احوال- امت اسلام
ذيشان وڑائچ
ہمارے کچھ نوجوان طیب اردگان کے بارے میں عجیب و غریب الجھن کے شکار ہیں۔ کوئی پوچھ رہا ہے کہ۔۔۔
احوال- امت اسلام
حامد كمال الدين
’’سلفیوں‘‘ کے ساتھ تھوڑی زیادتی ہو رہی ہے!    عرب داعی محترم ابو بصیر طرطوسی کے ساتھ بہت م۔۔۔
اصول- عقيدہ
اداریہ-
حامد كمال الدين
شرکِ ’’ہیومن ازم‘‘ کی یلغار..  اور امت کا طائفہ منصورہ حالات کو سرسری انداز میں پڑھنا... واقعات م۔۔۔
احوال-
اصول- منہج
راہنمائى-
حامد كمال الدين
پاکستانی سیاست میں اسلامی سیکٹر کے آگے بڑھنے کے آپشنز تحریر: حامد کمال الدین میری نظر میں، اس۔۔۔
Featured-
ثقافت- خواتين
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
ادارہ
فیمینسٹ جاہلیت کو جھٹلاتی ایک نسوانی تحریر اجالا عثمان انٹرنیٹ سے لی گئی ایک تحریر جو ہمیں ا۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
"نبوی منہج" سے متعلق ایک مغالطہ کا ازالہ حامد کمال الدین ایک تحریکی عمل سے متعلق "نبوی منہج۔۔۔
متفرق-
ادارہ
پطرس کے ’’کتے‘‘ کے بعد! تحریر: ابو بکر قدوسی مصنف کی اجازت کے بغیر شائع کی جانے والی ای۔۔۔
باطل- فرقے
اعتزال
ادارہ
ایک فیس بکی بھائی نے غامدی صاحب کی جہاد کے موضوع پر ویڈیو کا ایک لنک دے کر درخواست کی تھی کہ میں اس ویڈیو کو ۔۔۔
باطل- فرقے
احوال- وقائع
حامد كمال الدين
حامد کمال الدین ایک بڑی خلقت واضح واضح اشیاء میں بھی فرق کرنے کی روادار نہیں۔ مگر تعجب ہ۔۔۔
باطل- كشمكش
حامد كمال الدين
تحریر: حامد کمال الدین کہتا ہے میں اوپن ایئر میں کیمروں کے آگے جنازے کی اگلی صف کے اندر ۔۔۔
احوال-
باطل- شخصيات و انجمنيں
حامد كمال الدين
حامد کمال الدین ’’تنگ نظری‘‘ کی ایک تعریف یہ ہو سکتی ہے کہ: ایک چیز جس کی دین میں گنجائش۔۔۔
جہاد- مزاحمت
احوال- امت اسلام
حامد كمال الدين
کشمیر کےلیے چند کلمات حامد کمال الدین برصغیر پاک و ہند میں ملتِ شرک کے ساتھ ہمارا ایک سٹرٹیجک معرکہ ۔۔۔
ثقافت- رواج و رجحانات
ذيشان وڑائچ
میرے ایک معزز دوست نے ویلینٹائن ڈے کے حوالے سے ایک پوسٹ پیش کی ہے۔ پوسٹ شروع ہوتی ہے اس جملے سے"ویلنٹائن ۔۔۔
بازيافت- تاريخ
ادارہ
علاء الدین خلجی اور رانی پدماوتی تحریر: محمد فہد  حارث دوست نے بتایا کہ بھارت نے ہندو۔۔۔
کیٹیگری
Featured
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
Side Banner
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
احوال
امت اسلام
ذيشان وڑائچ
امت اسلام
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اداریہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اصول
منہج
حامد كمال الدين
عقيدہ
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ایقاظ ٹائم لائن
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
ذيشان وڑائچ
مزيد ۔۔۔
بازيافت
ادارہ
تاريخ
ادارہ
سلف و مشاہير
مہتاب عزيز
مزيد ۔۔۔
باطل
جدال
حامد كمال الدين
فكرى وسماجى مذاہب
ادارہ
فرقےاعتزال
ادارہ
مزيد ۔۔۔
تنقیحات
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ثقافت
خواتين
ادارہ
رواج و رجحانات
ذيشان وڑائچ
معاشرہ
عرفان شكور
مزيد ۔۔۔
جہاد
مزاحمت
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
راہنمائى
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
ابن علی
مزيد ۔۔۔
رقائق
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
فوائد
فہدؔ بن خالد
احمد شاکرؔ
تقی الدین منصور
مزيد ۔۔۔
متفرق
ادارہ
عائشہ جاوید
عائشہ جاوید
مزيد ۔۔۔
مشكوة وحى
علوم قرآن
حامد كمال الدين
مریم عزیز
ادارہ
مزيد ۔۔۔
مقبول ترین کتب
مقبول ترین آڈيوز
مقبول ترین ويڈيوز