عربى |English | اردو 
Surah Fatiha :نئى آڈيو
 
Friday, May 29,2020 | 1441, شَوّال 5
رشتے رابطہ آڈيوز ويڈيوز پوسٹر ہينڈ بل پمفلٹ کتب
شماره جات
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
تازہ ترين فیچر
Skip Navigation Links
نئى تحريريں
رہنمائى
نام
اى ميل
پیغام
2014-10 TaamulAhleQibla آرٹیکلز
 
مقبول ترین آرٹیکلز
فصل 7: اہل سنت "ليبلز" میں نہیں الجھتے
:عنوان

یہاں تعریف اور مذمت ہوتی ہی ’ٹھپوں‘ کی بنیاد پر ہے؛ اور یہی آسان ترین کام! کیونکہ "حقائق" کی بنیاد پر مدح اور مذمت کرنے لگیں... تو ایک ہی جماعت میں ہو سکتا ہے، ایک آدمی مدح کے قابل نکلے اور دوسرا نہ نکلے۔

. اصولمنہج :کیٹیگری
حامد كمال الدين :مصنف

شرح ’’تعامل اہل قبلہ‘‘ 7

اہل سنت

’’القاب‘‘.. میں نہیں الجھتے

(بسلسلہ حاشیہ 13، متن سفر الحوالی)

بالعموم... ایک فریق اپنے لیے اچھے سے اچھے القاب اور اپنے زیرعتاب طبقوں کےلیے برے سے برے القاب اور پیرائے رکھتا ہے۔ یہاں تک کہ بعض نعرے یا دعوے اس کے اپنے افراد کے لاشعور میں بیٹھ اور زبانوں سے چپک جاتے ہیں۔ ان کو اپنی بابت وہی کچھ ہونے کا ایک یقین سا ہوجاتا ہے جو کچھ القاب یا نعروں یا دعووں کی صورت ان کے یہاں برس ہا برس دہرایا گیا۔ ’دوسروں‘ کی بابت بھی اس بات کا ایک یقین سا ہو جاتا ہے جو ان کے بڑوں کے ہاں بڑی دیر تک کہی جاتی رہی!

چنانچہ القاب، لیبل، پیرائے ہی کہیں پر ’’مدح‘‘ کی بنیاد بن جاتے ہیں تو کہیں پر ’’مذمت‘‘ کی۔ خاص طور پر جب مسئلہ کسی جماعت کے ’عوام الناس‘ کی سطح پر جاتا ہے۔  یہاں تو آپ دیکھتے ہیں، تعریف اور مذمت ہوتی ہی ’ٹھپوں‘ کی بنیاد پر ہے؛ اور یہی آسان ترین کام ہے! کیونکہ ’’حقائق‘‘ کی بنیاد پر مدح اور مذمت کرنے لگیں... تو ایک ہی جماعت میں ہو سکتا ہے، ایک آدمی مدح کے قابل نکلے تو دوسرا مدح کے قابل نہ نکلے۔  دوسری جانب، ایک ہی جماعت میں ہو سکتا ہے ایک آدمی مذمت کا حقدار ہو تو اس کے ساتھ کھڑے دوسرے آدمی کی مذمت کرنا نہ بنتا ہو۔

پھر یہ بھی ہو سکتا ہے، کوئی جماعت صدی دو صدی پہلے جہاد یا اصلاح یا ارشاد میں واقعتاً ایک بہترین کردار ادا کر آئی ہو اور اس کی بنا پر وہ بہت اچھے القاب کی مستحق ٹھہر چکی ہو۔ لیکن بعد کے لوگ ایک بڑی تعداد میں ’’فَخَلَفَ مِن بَعدِھِم خَلفٌ‘‘[1]  والا نقشہ پیش کرنے لگے ہوں اور محض اپنے پہلوں کی کمائی پیش کر کے تحسین پا رہے[2]  اور ’’یُرِیدُونَ أن یُحمَدُوا بَمَا لَم یَفعَلُوا‘‘[3]   کا مصداق بن رہے ہوں۔ اکثر جماعتیں، حلقے، انجمنیں ذرا عرصہ گزر جانے (طَالَ عَلَیھِمُ الأمَدُ) کے بعد ’’گدیاں‘‘ بنتی دیکھی گئی ہیں جبکہ قربانیاں دینے والا عنصر کسی اور جانب کا رخ کر چکا ہوتا ہے۔ چنانچہ ایک جماعت یا حلقے کے اندر کارفرما حقیقتیں متغیرات میں آتی ہیں جبکہ نام، القاب، نعرے اور دعوے ثابت۔ ’’ظروف‘‘ وہی، مگر اندر کا ’’مواد‘‘ موسمی تبدیلیوں کے اثرات قبول کرجانے کے باعث کچھ سے کچھ۔ البتہ ’وابستگیوں‘‘ کا ہالہ دیکھتے ہی دیکھتے ’’عصبیتوں‘‘ میں ڈھل جاتا ہے۔

اس لحاظ سے لیبل  label اور ٹیگ  tag خوش نما مگر زیادہ تر  حقیقت سے نظر کو پھسلانے والی  misleading چیز ثابت ہوتی ہے۔ ائمۂ سلف اس سے بہت زیادہ دور رہنے والے لوگ تھے۔

ہمارے ان ائمہ کے نزدیک خود ’’اہل سنت‘‘ کوئی لقب یا کوئی ’جماعتی نام‘ نہیں بلکہ محض ایک وصف تھا۔ اندلس تا کاشغر، اور ایشیائے کوچک تا سراندیپ، امت کا ہر وہ آدمی جو کسی بدعتی ہلاکت میں پڑا ہوا نہیں یا کسی منحرف نسبت کو گلے لگا ئے نہیں پھرتا، ان کے نزدیک ’’اہل سنت‘‘ تھا۔ ابن عبد البرؓ امام مالک﷫ سے ایک روایت لاتے ہیں:

قَالَ جَاءَ رَجُلٌ إِلَى مَالِكٍ فَقَالَ يَا أَبَا عبد الله أَسْأَلُكَ عَنْ مَسْأَلَةٍ أَجْعَلُكَ حُجَّةً فِيمَا بَيْنِي وَبَيْنَ اللَّهِ عَزَّ وَجَلَّ قَالَ مَالِكٌ مَا شَاءَ اللَّهُ لَا قُوَّةَ إِلا بِاللَّهِ سَلْ قَالَ مَنْ أَهْلُ السُّنَّةِ قَالَ أَهْلُ السُّنَّةِ الَّذين لَيْسَ لَهُم لقب يعْرفُونَ بِهِ لاجهمى وَلا قَدَرِيٌّ وَلا رَافِضِيٌّ

(الانتقاء في فضائل الأئمة الفقهاء، مالك والشافعي وأبي حنيفة رضي الله عنهم، مؤلفه: ابن عبد البر. ص 35. ط دار الكتب العلمية)

ایک آدمی امام مالک کے ہاں آیا۔  بولا: ابو عبد اللہ! میں آپ سے ایک مسئلہ پوچھتا ہوں جس میں میں آپ کو اپنے اور اللہ عزوجل کے مابین حجت بناؤں گا۔  مالک بولے: سب طاقت توفیق اللہ ہی کے اختیار میں ہے، پوچھئے۔ وہ شخص بولا: اہل سنت کون ہوتے ہیں؟ امام مالک نے جواب دیا: اہل سنت وہ ہوتے ہیں جن کا کوئی لقب نہ ہو جس سے وہ پہچانے جارہے ہوں، نہ جھمی، نہ قدری اور نہ رافضی۔

*****

صحابہ میں سے کچھ خوش قسمت ’’السابقون الاولون‘‘ یا ’’مہاجرین و انصار‘‘ وغیرہ کہلائے تو درحقیقت یہ اللہ رب العزت کے بخشے ہوئے خطابات تھے۔ یا رسول اللہﷺ نے کسی کا کوئی خاص درجہ رکھ دیا تھا۔ جیسے ’’اہل بدر‘‘۔ یعنی ایک چیز ایک خاص وقت میں ہوئی اور گزر گئی۔ اس میں لقب یا تمییز کا وہ معنیٰ نہیں پایا جاتا جو لوگوں کو ’شمولیت‘ کےلیے اپنی جانب کھینچنے اور متوجہ کرانے کےلیے استعمال ہوتا ہے۔

اس کے  باوجود، جیساکہ شیخ الحوالی نے ذکر فرمایا، نبوی معاشرے میں احکام اور حقوق و واجبات کے معاملہ میں اِن سب القاب کو کچھ تاثیر حاصل نہ تھی۔

 


[1]   ’’ان (عظیم) لوگوں کے بعد ایسے ناخلف آئے‘‘

[2]   ’’چاہتے ہیں ان کی تعریف ہو اس کارنامے پر جو اِنہوں نے انجام نہیں دیا‘‘

[3]    بلکہ بیک وقت دو نقصان ہو رہے ہوتے ہیں:

1.        ایک، بعد والوں کا پہلے والوں کے نام پر داد سمیٹنا اور اپنے دور کے اصل لوگوں (جو ہوسکتا ہے اس وقت برے القاب پا رہے ہوں) کی جانب جُویانِ حق کی توجہ نہ جانے دینا۔

2.        دوسرا، کچھ لوگوں کا بعد والوں کی حالت دیکھ کر ان کے بڑوں کی بابت بھی اپنا تاثر خراب کر بیٹھنا کہ شاید وہ بھی اِنہی جیسے ہوں گے!

Print Article
Tagged
متعلقہ آرٹیکلز
ایک ٹھیٹ عقائدی تربیت ہماری سب سے بڑی ضرورت
اصول- منہج
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
اصول- عقيدہ
حامد كمال الدين
ایک ٹھیٹ عقائدی تربیت ہماری سب سے بڑی ضرورت حامد کمال الدین اسے فی الحال آپ ایک ناقص استقر۔۔۔
شخصیات اور پارٹیوں کے ساتھ تھوک کا معاملہ نہ کرنا
اصول- منہج
تنقیحات-
حامد كمال الدين
پراپیگنڈہ وار propaganda war میں سیگ منٹیشن segmentation (جزء کاری) ناگزیر ہوتی ہے۔ یعنی معاملے کو ای۔۔۔
شرکِ ’’ہیومن ازم‘‘ کی یلغار.. اور امت کا طائفہ منصورہ
اصول- عقيدہ
اداریہ-
حامد كمال الدين
شرکِ ’’ہیومن ازم‘‘ کی یلغار..  اور امت کا طائفہ منصورہ حالات کو سرسری انداز میں پڑھنا... واقعات م۔۔۔
پاکستانی سیاست میں اسلامی سیکٹر کے آگے بڑھنے کے آپشنز
احوال-
اصول- منہج
راہنمائى-
حامد كمال الدين
پاکستانی سیاست میں اسلامی سیکٹر کے آگے بڑھنے کے آپشنز تحریر: حامد کمال الدین میری نظر میں، اس۔۔۔
رسالہ اصول سنت از امام احمد بن حنبلؒ
اصول- عقيدہ
اصول- منہج
ادارہ
رســـــــــــــــــــــالة اصولِ سنت از امام احمد بن حنبل اردو استفاده: حامد كمال الدين امام ۔۔۔
’خطاکار‘ مسلمانوں کو ساتھ چلانے کا چیلنج
اصول- منہج
تنقیحات-
حامد كمال الدين
’خطاکار‘ مسلمانوں کو ساتھ چلانے کا چیلنج سوال: ایک مسئلہ جس میں افراط و تفریط کافی ہو ر۔۔۔
واقعۂ یوسف علیہ السلام کے حوالے سے ابن تیمیہ کی تقریر
تنقیحات-
اصول- منہج
حامد كمال الدين
قارئین کے سوالات واقعۂ  یوسف علیہ السلام کے حوالے سے ابن تیمیہ کی تقریر ہمارے کچھ نہایت عزیز ۔۔۔
’’آسمانی شریعت‘‘ نہ کہ ’سوشل کونٹریکٹ‘۔۔۔ ’’جماعۃ المسلمین‘‘ بہ موازنہ ’ماڈرن سٹیٹ‘
اصول- منہج
حامد كمال الدين
تعلیق 12   [1]   (بسلسلہ: خلافت و ملوکیت، از ابن تیمیہ) ’’آسمانی شریعت‘‘ نہ کہ ’سوشل ۔۔۔
"کتاب".. "اختلاف" کو ختم اور "جماعت" کو قائم کرنے والی
اصول- منہج
حامد كمال الدين
تعلیق 11   [1]   (بسلسلہ: خلافت و ملوکیت، از ابن تیمیہ) ’’کتاب‘‘ ’’اختلاف‘‘ کو خت۔۔۔
ديگر آرٹیکلز
جہاد- دعوت
عرفان شكور
كامياب داعيوں كا منہج از :ڈاكٹرمحمد بن ابراہيم الحمد جامعہ قصيم (سعودى عرب) ضرورى نہيں۔۔۔۔ ·   ضرور۔۔۔
باطل- فرقے
Featured-
حامد كمال الدين
"المورد".. ایک متوازی دین حامد کمال الدین اصحاب المورد کے ہاں "کتاب" سے اگر عین وہ مراد نہیں۔۔۔
جہاد-
احوال-
Featured-
حامد كمال الدين
’دوحہ‘ اہل اسلام کی ’جنیوا‘ سے بڑی جیت، ان شاء اللہ حامد کمال الدین ہمیں ’’زیادہ خوش نہ ہونے۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
اسلامی تحریک کا ’’مابعد تنظیمات‘‘ عہد؟ Post-organizations Era of the Islamic Movement یہ عن۔۔۔
حامد كمال الدين
باطل فرقوں کےلیے گنجائش پیدا کرواتے، دانش کے کچھ مغالطے   کچھ علمی چیزیں مانند (’’لازم المذھب لیس بمذھب‘۔۔۔
باطل- فرقے
حامد كمال الدين
شیعہ سٹوڈنٹ کے ساتھ دوستی، شادی بیاہ   سوال: السلام علیکم سر۔ یونیورسٹی میں ا۔۔۔
بازيافت- سلف و مشاہير
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
امارتِ حضرت معاویہؓ، مابین خلافت و ملوکیت نوٹ: تحریر کا عنوان ہمارا دیا ہوا ہے۔ از کلام ابن ت۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
سنت کے ساتھ بدعت کا ایک گونہ خلط... اور "فقہِ موازنات" حامد کمال الدین مغرب کے اٹھائے ہوئے ا۔۔۔
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
"انسان دیوتا" کے حق میں پاپ! حامد کمال الدین دین میں طعن کر لو، جیسے مرضی دین کے ثوابت ۔۔۔
بازيافت-
حامد كمال الدين
تاریخِ خلفاء سے متعلق نزاعات.. اور مدرسہ اہل الأثر حامد کمال الدین "تاریخِ خلفاء" کے تعلق س۔۔۔
باطل- اديان
حامد كمال الدين
ریاستی حقوق؛ قادیانیوں کا مسئلہ فی الحال آئین کے ساتھ حامد کمال الدین اعتراض: اسلامی۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
لفظ  "شریعت" اور "فقہ" ہم استعمال interchangeable    ہو سکتے ہیں ۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
ماتریدی-سلفی نزاع، یہاں کے مسلمانوں کو ایک نئی آزمائش میں ڈالنا حامد کمال الدین ایک اشع۔۔۔
تنقیحات-
حامد كمال الدين
منہجِ سلف کے احیاء کی تحریک میں ’مارٹن لوتھر‘ تلاش کرنا! حامد کمال الدین کیا کوئی وجہ ہے کہ۔۔۔
احوال-
حامد كمال الدين
      کشمیر کاز، قومی استحکام، پختہ اندازِ فکر کی ضرورت حامد ۔۔۔
تنقیحات-
مشكوة وحى- علوم حديث
حامد كمال الدين
اناڑی ہاتھ درایت! صحیح مسلم کی ایک حدیث پر اٹھائے گئے اشکال کے ضمن میں حامد کمال الدین ۔۔۔
راہنمائى-
حامد كمال الدين
(فقه) عشرۃ ذوالحج اور ایامِ تشریق میں کہی جانے والی تکبیرات ابن قدامہ مقدسی رحمہ اللہ کے متن سے۔۔۔
تنقیحات-
ثقافت- معاشرہ
حامد كمال الدين
کافروں سے مختلف نظر آنے کا مسئلہ، دار الکفر، ابن تیمیہ اور اپنے جدت پسند حامد کمال الدین دا۔۔۔
کیٹیگری
Featured
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
Side Banner
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
احوال
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اداریہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اصول
عقيدہ
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ایقاظ ٹائم لائن
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
ذيشان وڑائچ
مزيد ۔۔۔
بازيافت
سلف و مشاہير
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
حامد كمال الدين
ادارہ
مزيد ۔۔۔
باطل
فرقے
حامد كمال الدين
فرقے
حامد كمال الدين
فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
تنقیحات
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ثقافت
معاشرہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
خواتين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
جہاد
دعوت
عرفان شكور
حامد كمال الدين
مزاحمت
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
راہنمائى
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
رقائق
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
فوائد
فہدؔ بن خالد
احمد شاکرؔ
تقی الدین منصور
مزيد ۔۔۔
متفرق
ادارہ
عائشہ جاوید
عائشہ جاوید
مزيد ۔۔۔
مشكوة وحى
علوم حديث
حامد كمال الدين
علوم قرآن
حامد كمال الدين
مریم عزیز
مزيد ۔۔۔
مقبول ترین کتب
مقبول ترین آڈيوز
مقبول ترین ويڈيوز