عربى |English | اردو 
Surah Fatiha :نئى آڈيو
 
Monday, August 2,2021 | 1442, ذوالحجة 22
رشتے رابطہ آڈيوز ويڈيوز پوسٹر ہينڈ بل پمفلٹ کتب
شماره جات
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
  
 
تازہ ترين فیچر
Skip Navigation Links
نئى تحريريں
رہنمائى
نام
اى ميل
پیغام
weekly آرٹیکلز
 
مقبول ترین آرٹیکلز
شام میں حضرت عمر بن عبدالعزیزؒ کے مدفن کی بےحرمتی کا افسوسناک واقعہ اغلباً صحیح ہے
:عنوان

اس بات کا امکان خاصا معدوم ہے کہ یہ واقعہ ہوا ہی نہ ہو، اور نری ایک خبر گھڑ لی گئی ہو۔ جنوری کے اواخر میں شامی سوشل میڈیا پر اس معاملہ میں اس قدر تو تکرار ہے کہ اس واقعہ کا نہ ہوا ہونا مستبعد ہے

. باطلفرقے . احوالوقائع :کیٹیگری
حامد كمال الدين :مصنف

شام میں حضرت عمر بن عبدالعزیزؒ کے مدفن کی بےحرمتی کا افسوسناک واقعہ اغلباً صحیح ہے

حامد کمال الدین

شام میں معروف مزارات پر بمباری تو متعدد بار ہوئی۔ لیکن مدفن عمر بن عبدالعزیزؒ کی قصداً توہین (باقاعدہ قبر اکھاڑنا) کا واقعہ اغلباً امسال جنوری میں پیش آیا۔ اس کا ذمہ دار شامی جنرل رمضان یوسف گزشتہ مارچ میں ترکی ڈرون کے ہاتھوں مردار بھی ہو چکا ہے۔ دیکھیے

شام سے باہر یہ خبر البتہ اب نکلی ہے، بذریعہ الجزیرہ اور چند دیگر مصادر۔ اس کی زیادہ بڑی وجہ شام کی باغی و اپوزیشن جماعتوں کے کولیشن "الائتلاف الوطني لقوى الثورة والمعارضة السورية" کی جانب سے اس مسئلہ کو از سر نو اٹھانا ہے۔ دیکھیے کولیشن کی پریس ریلیز مجریہ 29 جنوری:

شامی سوشل میڈیا کو دیکھیں تو بہت زیادہ شور اس مسئلہ پر جنوری کی آخری تاریخوں میں ہی درج ملتا ہے۔ ’’کولیشن‘‘ کی جانب سے اس مسئلہ کو مئی کے اواخر میں از سرنو کیوں اٹھایا گیا؟ زیادہ معلوم نہیں ہو سکا۔ لیکن الجزیرۃ کے نقل کردہ شامی صحافی احمد الشامی کے ٹویٹ  سے معلوم ہوتا ہے کہ قبر کی بےحرمتی اب ایک بار پھر ہوئی ہے۔ احمد الشامی نے صراحت کی ہے کہ ایرانی ملیشیاؤں نے یہ حرکت اس سے پہلے بھی کی اور اب پھر۔  ان کا اشارہ اغلباً جنوری کے واقعہ کی طرف ہے۔

اس بات کا امکان خاصا معدوم ہے کہ یہ واقعہ ہوا ہی نہ ہو، اور نری ایک خبر گھڑ لی گئی ہو۔ جنوری کے اواخر میں شامی سوشل میڈیا پر اس معاملہ میں اس قدر تو تکرار ہے کہ اس واقعہ کا نہ ہوا ہونا مستبعد ہے۔ صرف یہ دیکھنا رہ جاتا ہے کہ یہ حرکت کرنے والا کون ہو سکتا ہے۔

اس سلسلہ میں، لبنان کے ایک سیکولر اخبار ’’المدن‘‘ کی 31 جنوری کی یہ رپورٹ میرے نزدیک قابل توجہ ہے۔

دلچسپ طور پر، ’’المدن‘‘ کے مطابق عمر بن عبدالعزیز کے مدفن میں آتش زنی، تخریب اور لوٹ مار پر مشتمل تصویریں پہلے بشارالاسد کے وفادار ویب سائٹس خصوصاً بشاری خبر رساں ایجنسی ’’سانا‘‘  کی جانب سے نشر ہوئیں۔ بشار کے وفادار ویب سائٹس ’’سانا‘‘ سے پہلے البتہ ایک اور کام کر بیٹھے: 25 جنوری کو  علاقے میں بشاری فوج کی فتح (باغیوں سے اس علاقہ کو واگزار کروانے میں اپنی کامیابی) دکھانے کےلیے علاقے کے اس مشہور مقام مزار عمر بن عبدالعزیز کی بھی تصویر دی۔ مزار کی اس تصویر میں تخریب کاری کے کوئی شواہد نہ تھے۔ جس کا مطلب ہے یہ تخریب شامی حکومت اور اس کی ملیشیاؤں کی اپنی ہے۔

اسی علاقے ’’الدیر الشرقی‘‘ کے ایک صحافی نے اس سلسلہ میں ’’المدن‘‘ کو بتایا: ادلب کے مشرقی دیہات پر روسی حملے کے دوران روسی طیاروں نے اس مزار کو براہ راست نشانہ بنایا تھا، لیکن اس سے صرف مزار کی خارجی فصیل گری تھی اور عمارت کے اندورن کا تھوڑا نقصان ہوا تھا۔ جس کی شامی حکومت اور اس ملیشیاؤں کے اس علاقہ پر حاوی ہونے سے پہلے مرمت بھی کر لی گئی تھی۔  صحافی احمد الدیری نے ’’المدن‘‘ کو اس کی وجہ بتاتے ہوئے کہا: حکومتی ذرائع ابلاغ یہ تصویریں دکھا کر دراصل شام کی باغی جماعتوں کی شدت پسندی دکھانا چاہتے تھے، جو قبروں اور مزاروں کے بیری ہوتے ہیں، تاکہ ادلب کے معرکہ میں ان جماعتوں کے خلاف شامی حکومت کو عالمی تائید حاصل ہو۔

غرض جہادی جماعتوں کی ’’وہابیت‘‘ اور ’’مزار دشمنی‘‘ دکھانے کےلیے حکومتی ملیشیاؤں نے کوئی ایسی گھٹیا تدبیر چلی ہے۔

علاوہ ازیں، ترکی میں حدیث اور استشراق کے ایک پاکستانی پروفیسر ڈاکٹر عالم خان نے شام میں اپنے شخصی ذرائع سے رابطہ کر کے بھی اس واقعہ کی تصدیق کی ہے۔ فیس بک پر ان کا بیان یہاں سے دیکھا جا سکتا ہے۔

یہاں ایک ’منطقی‘ دلیل کا بھی تھوڑا جائزہ لیتے چلیں کہ روافض اور نُصیریہ کا تو کوئی گروہ حضرت عمر بن عبد العزیزؒ کے مزار کے ساتھ یہ حرکت کر ہی نہیں سکتا، کیونکہ یہ تو ان کی قدر ہی بہت زیادہ کرتے ہیں، اس لیے کہ حضرت محمد بن علی (الملقب باقر رحمہ اللہ) کا حضرت عمر بن عبدالعزیزؒ سے کچھ خاطر تعلق رہا تھا۔

تو اس معاملہ میں عرض ہے، یہ تو واقعی کیسے ہو سکتا ہے کہ اہل بیت کے تمام بزرگ، سمیت حضرت محمدؒ بن علیؒ بن الحسینؓ، حضرت عمر ؒبن عبدالعزیزؒ  ایسے ولی اللہ سے محبت نہ کرتے ہوں۔ لیکن اس سے پہلے ہم پوچھ لیتے ہیں کہ یہ کیسے ہو سکتا ہے کہ اِن (حضرت محمدؒ بن علیؒ بن الحسینؓ) کے جد امجد حضرت علیؓ بن ابی طالب حضرت عمرؓ  بن خطاب سے محبت نہ کرتے ہوں؟ کیا سب نہیں جانتے کہ علیؓ، عمرؓ  کے ہاں وزیر اور مشیر کی حیثیت رکھتے تھے اور ان میں پیار اور محبت مثالی تھا؟ لیکن آپ سوچیے حضرت علیؓ بن ابی طالب کی حضرت عمرؓ بن خطاب کے ساتھ اُس اتھاہ محبت کا ان روافض کی صحت پر کیا اثر؟ جس شخص کو یہ معلوم ہے کہ رافضیت ایک مخصوص ایجنڈا ہے، جو بزرگانِ اہل بیت رضوان اللہ علیہم کے صحابہ و تابعین رضوان اللہ علیہم کے ساتھ اُس تمام تر پیار، محبت اور یگانگت کو اپنا ایک ’مخصوص‘ معنیٰ دے کر ہی آگے چلتا ہے، اور یہ کہ مذہب کی اصل بہرحال ان تمام ہستیوں کےلیے بغض ہے، وہ حضرت محمد بن علی باقرؒ کے عمر بن عبدالعزیزؒ کے ساتھ مراسم کو بھی اس کے ’صحیح‘ سیاق میں دیکھ سکتا ہے۔

علاوہ ازیں، رافضہ کے مصادر میں حضرت عمر بن عبد العزیزؒ کےلیے بھی ہمیں لعنت ہی نظر آتی ہے۔ مثال کے طور پر یہ روایت:

قال أبو بصير: كنت مع الباقر عليه السلام في المسجد، إذ دخل عليه عمر بن عبد العزيز، عليه ثوبان ممصران متكئا على مولى له. فقال عليه السلام: ليلين هذا الغلام، فيظهر العدل، ويعيش أربع سنين، ثم يموت فيبكي عليه أهل الأرض، ويلعنه أهل السماء. فقلنا: يا بن رسول الله، أليس ذكرت عدله وإنصافه؟ قال: يجلس في مجلسنا، ولا حق له فيه

ترجمہ: ’’ابو بصیر نے کہا: میں باقر علیہ السلام کے ساتھ مسجد میں تھا کہ عمر بن عبدالعزیز داخل ہوا، اس پر  دو زرد کپڑے تھے، اپنے ایک غلام کا سہارا لیے تھا۔ تب آپ (حضرت باقر) علیہ السلام نے فرمایا: ضرور یہ لڑکا اقتدار پائے گا۔ تب یہ عدل ظاہر کرے گا اور چار سال رہے گا پھر مر جائے گا۔ تب اس پر اہل زمین روئیں گے، اور اہل آسمان اس پر لعنت کریں گے۔ تب ہم نے عرض کیا: اے فرزندِ رسول اللہ! آپ نے تو ابھی اس کے عدل اور انصاف کا ذکر نہیں فرمایا؟ فرمایا: ہماری گدی پر بیٹھا ہو، جس کا اسے کوئی حق نہیں۔

تاآنکہ ہماری اس بات کی غلط تفسیر نہ ہو: ہم نے یہ روایت یہ ’’ثابت‘‘ کرنے کےلیے نہیں دی کہ ضرور انہوں نے ہی یہ کام کیا ہے!!! بلکہ یہ روایت صرف اس زعم کے ازالہ کےلیے کی ہے کہ یہ ٹولہ حضرت عمر بن عبدالعزیز کا کوئی خاص معتقد ہے۔ معتقد یہ کسی کے نہیں ہیں۔

واضح رہے، یہ مضمون شام میں ایسے کسی افسوس ناک واقعہ پیش آنے کے امکانات کو صرف قوی تر بتانے کےلیے تحریر ہوا ہے کہ شواہد زیادہ تر اسی طرف اشارہ کر رہے ہیں۔ کسی کا واقعاتی تجزیہ اس سے مختلف ہو تو وہ ضرور اپنی رائے رکھے۔ خود میں نے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ میں شروع دن سے اس واقعہ سے متعلق کچھ قابل اعتبار لوگوں کے ٹویٹ صرف ری ٹویٹ کیے ہیں جبکہ پروفائل میں یہ درج ہے کہ ریٹویٹ کا اینڈورسمنٹ ہونا ضروری نہیں۔

Print Article
Tagged
متعلقہ آرٹیکلز
یہ "سیزفائر" یا "جان بخشی" کی خوشی نہیں، دانش گرو!
Featured-
احوال-
حامد كمال الدين
یہ "سیزفائر" یا "جان بخشی" کی خوشی نہیں، دانش گرو! حامد کمال الدین فلسطینی قوم کی خوشیوں پر ۔۔۔
سعودی سکولوں میں "مہابهارت پڑهانے" کی ہوائی!
احوال-
Featured-
حامد كمال الدين
سعودی سکولوں میں "مہابهارت پڑهانے" کی ہوائی! حامد کمال الدین ایک طرف حالیہ سعودی رہنماؤں کا بوجوہ بن ۔۔۔
کسی کی "نیت" اور "اخلاص" کا ثبوت آنے تک
احوال- تبصرہ و تجزیہ
راہنمائى-
حامد كمال الدين
کسی کی "نیت" اور "اخلاص" کا ثبوت آنے تک! === میڈیا سٹریٹجی کے چند مختصر مباحث  2 حامد کمال۔۔۔
ایک "اِبلاغی چابکدستی" ہم پر حرام نہیں ہے
راہنمائى-
احوال-
حامد كمال الدين
ایک "اِبلاغی چابکدستی" ہم پر حرام نہیں ہے! حامد کمال الدین دین پسندوں کی "میڈیا سٹرٹیجی" کے تعلق سے،۔۔۔
لبرل معاشروں میں "ریپ" ایک شور مچانے کی چیز نہ کہ ختم کرنے کی
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
Featured-
حامد كمال الدين
لبرل معاشروں میں "ریپ" ایک شور مچانے کی چیز نہ کہ ختم کرنے کی حامد کمال الدین بنتِ حوّا کی ع۔۔۔
"المورد".. ایک متوازی دین
باطل- فرقے
ديگر
حامد كمال الدين
"المورد".. ایک متوازی دین حامد کمال الدین اصحاب المورد کے ہاں "کتاب" سے اگر عین وہ مراد نہیں۔۔۔
’دوحہ‘ اہل اسلام کی ’جنیوا‘ سے بڑی جیت، ان شاء اللہ
جہاد-
احوال-
حامد كمال الدين
’دوحہ‘ اہل اسلام کی ’جنیوا‘ سے بڑی جیت، ان شاء اللہ حامد کمال الدین ہمیں ’’زیادہ خوش نہ ہونے۔۔۔
شیعہ سٹوڈنٹ کے ساتھ دوستی، شادی بیاہ
باطل- فرقے
حامد كمال الدين
شیعہ سٹوڈنٹ کے ساتھ دوستی، شادی بیاہ   سوال: السلام علیکم سر۔ یونیورسٹی میں ا۔۔۔
"انسان دیوتا" کے حق میں پاپ!
باطل- فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
"انسان دیوتا" کے حق میں پاپ! حامد کمال الدین دین میں طعن کر لو، جیسے مرضی دین کے ثوابت ۔۔۔
ديگر آرٹیکلز
Featured-
حامد كمال الدين
8 دینداروں کے معاشرے میں آگے بڑھنے کو، جمہوریت واحد راستہ نہیں تحریر: حامد کمال الدین ۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
7 "اقتدار" سے بھی بڑھ کر فی الحال ہمارے پریشان ہونے کی چیز تحریر: حامد کمال الدین مض۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
6 جمہوری راستہ… اور اسلامی انقلاب تحریر: حامد کمال الدین مضمون: خلافتِ نبوت سے۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
5 جمہوریت کو "کلمہ" پڑھانا کیا ضروری ہے؟ تحریر: حامد کمال الدین مضمون: خلافتِ ۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
4 جمہوریت… اور اسلام کی تفسیرِ نو تحریر: حامد کمال الدین مضمون: خلافتِ نبوت سے۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
3 جمہوری پیکیج، "کمتر برائی"… یا "آئیڈیل"؟ تحریر: حامد کمال الدین مضمون: خلافتِ نبوت سے عد۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
2 جمہوری راستہ اختیار کرنے پر، دینداروں کے یہاں دو انتہائیں تحریر: حامد کمال الدین ۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
1 کامل خلافتِ نبوت سے عدولی، ملوکیتی ادوار پر جمہوری فارمیٹ کا قیاس؟ تحریر: حامد ک۔۔۔
Featured-
حامد كمال الدين
جاہلیت کے سب دستور آج میرے پیر کے نیچے! تحریر: حامد کمال الدین  خطبۂ حجة الوداع، جس کی باز۔۔۔
Featured-
تنقیحات-
حامد كمال الدين
"نفس کی اطاعت" شرک کب بنتی ہے؟ حامد کمال الدین برصغیر کے فکری رجحانات صوفیت کے زیرِاثر رہے۔۔۔
Featured-
تنقیحات-
حامد كمال الدين
ایک "عقیدہ بیسڈ" aqeedah-based بیانیہ جو "اعمال" میں نرمی اور تدریج پر کھڑا ہو حامد ک۔۔۔
تنقیحات-
Featured-
حامد كمال الدين
"دلیل ازم" کا ایک ٹپیکل مغالطہ حامد کمال الدین سوال: کیا آپ اس عبارت سے متفق ہیں؟ [ر۔۔۔
اصول- منہج
Featured-
حامد كمال الدين
فقہ الموازنات، ایک تصویر کو پورا دیکھ سکنا حامد کمال الدین برصغیر کا ایک المیہ، یہاں کے کچھ۔۔۔
Featured-
اصول- عقيدہ
حامد كمال الدين
نواقضِ اسلام کو پڑھنے پڑھانے کی تین سطحیں حامد کمال الدین انٹرنیٹ پر موصول ہونے والا ایک س۔۔۔
Featured-
احوال-
حامد كمال الدين
یہ "سیزفائر" یا "جان بخشی" کی خوشی نہیں، دانش گرو! حامد کمال الدین فلسطینی قوم کی خوشیوں پر ۔۔۔
Featured-
تنقیحات-
حامد كمال الدين
صخرہ کو مسجداقصىٰ سے باہر ٹھہرانے پر ابن تیمیہ سے حوالہ دینا! حامد کمال الدین سب سے پہلے ذک۔۔۔
Featured-
جہاد- تحريك
حامد كمال الدين
سلفی دیوبندی جماعتی خلافتی "معارک" کے چند ایس او پیز حامد کمال الدین ایک کام کر لیں، میرا خ۔۔۔
احوال-
Featured-
حامد كمال الدين
سعودی سکولوں میں "مہابهارت پڑهانے" کی ہوائی! حامد کمال الدین ایک طرف حالیہ سعودی رہنماؤں کا بوجوہ بن ۔۔۔
کیٹیگری
Featured
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
Side Banner
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
احوال
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
تبصرہ و تجزیہ
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اداریہ
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
اصول
منہج
حامد كمال الدين
عقيدہ
حامد كمال الدين
منہج
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ایقاظ ٹائم لائن
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
ذيشان وڑائچ
مزيد ۔۔۔
بازيافت
سلف و مشاہير
شيخ الاسلام امام ابن تيمية
حامد كمال الدين
ادارہ
مزيد ۔۔۔
باطل
فكرى وسماجى مذاہب
حامد كمال الدين
فرقے
حامد كمال الدين
فرقےديگر
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
تنقیحات
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
ثقافت
معاشرہ
حامد كمال الدين
خواتين
حامد كمال الدين
خواتين
ادارہ
مزيد ۔۔۔
جہاد
تحريك
حامد كمال الدين
تحريك
حامد كمال الدين
دعوت
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
راہنمائى
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
رقائق
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
اذكار و ادعيہ
حامد كمال الدين
مزيد ۔۔۔
فوائد
فہدؔ بن خالد
احمد شاکرؔ
تقی الدین منصور
مزيد ۔۔۔
متفرق
ادارہ
عائشہ جاوید
عائشہ جاوید
مزيد ۔۔۔
مشكوة وحى
علوم حديث
حامد كمال الدين
علوم قرآن
حامد كمال الدين
مریم عزیز
مزيد ۔۔۔
مقبول ترین کتب
مقبول ترین آڈيوز
مقبول ترین ويڈيوز